منگلادینہاہم خبریں

عدالت نے فواد چوہدری اور فراز چوہدری کو گرفتار کرنے سے روک دیا

دینہ: عدالت نے سابق وفاقی وزیر فواد چوہدری اور ان کے بھائی فراز چوہدری کو گرفتار کرنے سے روکنے کا حکم دے دیا۔

تفصیلات کے مطابق تحریک انصاف کے 25 مئی کے مارچ کے تناظر میں تھانہ منگلا کینٹ میں درج مقدمہ کے خلاف سابق وفاقی وزیر اور پی ٹی آئی کے رہنما فواد چوہدری نے اسلام آباد ہائی کورٹ میں حفاظتی ضمانت کی درخواست دائر کردی۔ اسلام آباد ہائی کورٹ میں چھٹی کے روز فواد چوہدری اور ان کے بھائی کی درخواستوں پر سماعت چیف جسٹس اطہر من اللہ نے کی۔

اسلام آباد ہائیکورٹ نے فواد چوہدری اور ان کے بھائی فراز چوہدری کی دس روز کے لیے حفاظتی ضمانت منظور کرتے ہوئے پولیس کو فواد چوہدری اور فراز چوہدری کی گرفتاری سے روک دیا، جب کہ دونوں کو پانچ پانچ ہزار روپے کے مچلکے جمع کرانے کا حکم دیتے ہوئے 10 روز میں متعلقہ عدالت میں پیش ہونے کا حکم بھی دے دیا۔

یاد رہے 25 مئی کو آزادی مارچ کے قافلے کی قیادت کرنے پر جہلم پولیس نے تحریک انصاف کے رہنما فواد چوہدری اور فراز چوہدری سمیت 200افراد کیخلاف مقدمہ درج کیا تھا۔

ایف آئی آر مختلف دفعات کے تحت تھانہ منگلا میں درج کی گئی، جس میں غیرقانونی ریلی نکالنے اور پولیس پر پتھراؤ کا الزام عائد کیا گیا تھا۔

ایف آئی آر کے متن میں کہا گیا تھا کہ شرکا ریلی کے پتھراؤ سے پولیس اہلکار زخمی ہوئے جبکہ پتھراؤ سے پولیس وین اور دیگر گاڑیوں کو نقصان پہنچا۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button