ڈپٹی ڈائریکٹر کالجز جہلم نے ذاتی تعلقات کو نبھانے کیلئے سینکڑوں طلبا و طالبات کا تعلیمی مستقبل داؤ پر لگا دیا

0

کھیوڑہ: ڈپٹی ڈائریکٹر کالجز جہلم نے ذاتی تعلقات کو نبھانے کیلئے کامرس کالج کے سینکڑوں طلبا و طالبات کا تعلیمی مستقبل دا ؤپر لگا دیا۔

گریڈ18میں ترقی اور صرف8 ماہ قبل مستقل ہونے والے انسٹرکٹر کو قانونی تقاضوں کو پس پشت ڈال کر اپنے چہیتے کو پرنسپل بنانے کیلئے اوچھے ہتھکنڈے، 19 گریڈ میں ترقی پانے والے سینئر انسٹرکٹر/ ایکٹنگ پرنسپل کو کھڈے لائن لگانے کیلئے تگو دو شروع، اولڈ کامرس سٹوڈنٹس ایسوسی ایشن اور طلبا و طالبات کے والدین سخت پریشان سیکرٹری تعلیم سے فوری ایکشن لینے کا مطالبہ ۔

تفصیلات کے مطابق ڈائریکٹریٹ پنجاب انستریکشن کالجز لاہور نے پنجاب بھر کے کالجز جن کی طالبعلموں کی تعداد 500 یا کم کالجز میں پرنسپل کی خالی آسامیوں کیلئے درخواستیں طلب کی اس سلسلہ میں کامرس کالج جہلم کی تعداد چونکہ800 سے زائد ہے جس پر کوئی درخواست نہ دی گئی۔

اس پر ستم کہ ڈپٹی ڈائریکٹر کالجز جہلم نے اپنے من پسند انسٹرکٹر صرف8 ماہ قبل ہی مسقل ہوا ہے اور گریڈ18 میں پہنچا ہے جبکہ اس سے قبل عارضی پرنسپل گریڈ19 میں پرموٹ ہوا ہے ڈی ڈی سی بے جا مداخلت کرکے کالج کے حالات خراب کر رہا ہے اور عارضی چارج پرنسپل کو دبا میں لاکر چارج چھڑوانا چاہتا ہے ۔

اولڈ کامرد سٹوڈنٹس ایسوسی ایشن جہلم کے صدر اراکین کے علاوہ طلبا و طالبات کے والدین نے سیکرٹری تعلیم سے مطالبہ کیا ہے کہ ایک ایسے شخص کو کالج کا پرنسپل نہ لگایا جائے جسکو کالج سے سزا کے طور پر تبادلہ کیا گیا تھا اور ایک سینئر پر جونیئر افسر مسلط کرنا بھی خلاف قانون ہے۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.