جہلماہم خبریں

کار کی ٹکر سے موٹرسائیکل سوار 3 سالہ بچی اور نوجوان ٹرالر کے نیچے آ کر جاں بحق، خاتون اور بچی زخمی

جہلم: جی ٹی روڈ جادہ کے مقام پر تیز رفتار کار کی ٹکر سے موٹر سائیکل سوار خاندان لقمہ اجل بن گئے، کار کی ٹکر سے موٹر سائیکل سوار فیملی ٹرالر کے نیچے آکر کچلے گئے، 3سالہ بچی اور نوجوان جاں بحق جبکہ خاتون اور ایک بچی زخمی ہو گئی۔

جاں بحق ہونے والے نوجوان اسرار احمد کے بھائی نے پولیس چوکی کالا گجراں درخواست دیتے ہوئے موقف اختیار کیا کہ میں نتھیہ قریشیاں (سرائے عالمگیر) کا رہائشی ہوں۔ جمعہ کے روز بسواری موٹر سائیکل میں اور میرا بھائی اسراراحمد ولد صدیق احمد ساکن نتھیہ قریشیاں سرائے عالمگیر اپنی بیوی سویرا اسرار اور اپنی بیٹی ایشال فاطمہ ، ایمان فاطمہ کے ہمراہ موٹر سائیکل نمبری 6249/JML شاپنگ کرنے لئے یومارٹ جی ٹی روڈ جہلم آئے۔

انہوں نے بتایا کہ میرا بھائی فیملی کے ساتھ شاپنگ کے بعد واپس اپنے گھر اپنی اپنی موٹر سائیکلوں پر جا رہے تھے کہ جب ہم بالمقابل ریجنل آفس ایچ بی ایل جی ٹی روڈ پہنچے تو آگے آگے میرا بھائی اسرار احمد اپنی فیملی کے ہمراہ جارہا تھا اور تھوڑے فاصلے پر پیچھے میں اپنی موٹر سائیکل پر جا رہا تھا کہ بوقت قریب دن ساڑھے بارہ بجے دن میرا بھائی اسرار اپنی فیملی کے ہمراہ اپنی موٹر سائیکل پر آگے جاتے ہوئے ٹرالر نمبری 2664/RIS کو اوور ٹیک کرنے لگا تو پیچھے سے ایک کار نمبری ABL-550 برنگ سفید انتہائی تیز رفتاری سے آئی۔

انہوں نے بتایا کہ تیز رفتار کار کو نامعلوم ڈرائیور انتہائی غفلت سے چلا رہا تھا، اس کار نے میرے بھائی کی موٹر سائیکل کو ہٹ کیا جو موٹر سائیکل الٹ گئی اور ٹرالر والے نے بھی راستہ نہ دیا اور موٹر سائیکل ٹرالر کے نیچے آکر کچلی گئی اور میرا بھائی اسرار احمد ولد صدیق احمد اور میری بھتیجی ایشال فاطمہ بعمر 3 سال موقع پر ہی جاں بحق ہوگئے اور میری بھابھی سویرا اسرار اور میری دوسری بھتیجی ایمان فاطمہ دختر اسرار احمد بعمر 3 ماہ زخمی ہوگئیں جن کو 1122 کے ذریعے ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹر ہسپتال منتقل کیا گیا ہے۔

یہ حادثہ نامعلوم کار ڈرائیور اور نامعلوم ٹرالر ڈرائیور کی غفلت و لاپرواہی و بے احتیاطی اور تیز رفتاری کی وجہ سے پیش آیا ہے۔ پولیس نے ضروری کارروائی کے بعد نعشیں ورثاء کے حوالے کردیں جبکہ کار اور ٹرالر ڈرائیور کی تلاش شروع کر دی گئی ہے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button