کھیوڑہ

معاشرے کی ترقی میں طلبہ اور اساتذہ کا اہم کردار ہے۔ سید اسد علی بخاری

کھیوڑہ: اب اس ملک کو ہم نے سنوارنا ہے اسے حاصل کرنے کے لیے ہمارے آباو اجداد نے لازوال قربانیاں دیں لیکن ہم وہ مقاصد حاصل نہیں کر سکے جس کے لیے ہم نے یہ ملک پاکستان حاصل کیا تھا آج اپنے بچوں کی خود اعتمادی دیکھ کر لگتا ہے کہ یہ بچے مستقبل میں ہماری کوتاہیوں کا ازالہ کریں گے۔

ان خیالات کا اظہار سید اسد علی بخاری معروف سیاسی سماجی و صحافتی شخصیت نے دارارقم سکول کی سالانہ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے۔ انہوں نے کہا کہ مائیں بچوں کی تعلیم و تربیت کی طرف خصوصی توجہ دیں اور ایسے اداروں کا انتخاب کریں جس میں دنیاوی تعلیم کے ساتھ ساتھ دینی تعلیم سے آراستہ کیا جائے تاکہ مستقبل کے معمار پاکستان کا سرمایہ بننے کے ساتھ ساتھ اسلام کے سپوت بن سکیں۔

سید اسد علی بخاری نے کہا کہ آج کے دور میں جہاں ہمیں اچھے ڈاکٹر اچھے انجینئرز اچھے وکلاء اچھے اساتذہ بنانے ہیں یہ بھی اشد ضروری ہے کہ آج کے بچوں کو مستقبل کا اچھا مسلمان بنایا جائے جو معاشرے میں مسلمانوں کے اصولوں کا صحیح طور پر آئینہ دار ہو یہ جہاں پہ والدین کی ذمہ داری ہے وہاں سکولوں میں پڑھانے اساتذہ کی بھی اہم ذمہ داری ہے کہ وہ بچوں کو دنیاوی و سائنسی تعلیم کے ساتھ ساتھ دینی تعلیم سے بھی روشناس کریں ۔

انہوں نے مزید کہا کہ معاشرے کی ترقی میں طلبہ اور اساتذہ کا اہم کردار ہے، والدین کے ساتھ ساتھ اساتذہ بھی بچوں کی کردار سازی پر توجہ دیں، دارارقم سکول سکولزتحصیل پنڈدادنخان کے ہونہار طلبہ کی کردار سازی میں اہم کردار ادا کر رہا ہے ۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button