جہلم

یکم جنوری سے پراپرٹی ٹیکس میں اضافہ ہو گا، سیکشن 9 پر سختی سے عملدرآمد کرنے کا حکم دیدیا گیا

جہلم: یکم جنوری سے پراپرٹی ٹیکس میں اضافہ ،سیکشن 9 پر سختی سے عملدرآمد کرنے کا حکم دیدیا گیا۔
رواں سال جہلم سمیت صوبہ بھر میں سیکشن 9 کے تحت کمرشل اور رہائشی جائیدادوں کے ٹیکس میں اضافہ نہ ہونے کے باعث قومی خزانے کو 3 ارب روپے سے زائد کا نقصان ہوا جس پر صوبائی حکومت نے ایکسائز اینڈ ٹیکسیشن کے افسران سے جواب طلب کرلیا اور سیکشن 9 پر سختی سے عملدرآمد کرانے کے احکامات جاری کئے ہیں۔
محکمہ ایکسائز کے ذرائع کے مطابق پراپرٹی ٹیکس ایکٹ کے سیکشن 9 کے تحت ایکسائز افسران پر یہ لازم ہوتا ہے کہ ہر سال یکم جنوری اور مالی سال کے آغاز یکم جولائی کو ہر 6 ماہ بعد کمرشل اور رہائشی جائیدادوں کا سرکل آفیسر سروے کرے اور پراپرٹی کی موجودہ صورتحال، کرایہ اور حجم وغیرہ کے مطابق ٹیکس میں اضافہ کرے لیکن جہلم سمیت صوبہ بھر میں سیکشن 9 پر عملدرآمد نہیں کروایا گیا جس سے قومی خزانے کو 3 ارب روپے کا خسارہ برداشت کرنا پڑا ہے۔
حکومت پنجاب نے محکمہ ایکسائز کے افسران کو ہدایات جاری کی ہیں کہ سیکشن 9 پر سختی سے عملدرآمد کیا جائے تاکہ قومی خزانے کو خسارے سے بچایا جا سکے۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button