پنڈدادنخاناہم خبریں

پنڈدادنخان میں نوسر باز گروپ سر گرم، نوسرباز نے ڈرئیوار سے ڈیڑھ لاکھ روپے ہتھیا لئے

پنڈدادنخان: تحصیل پنڈدادنخان میں تیزی سے بڑھتے جرائم سے عوام عدم تحفظ کا شکار، کئی دنوں سے نوسر باز گروپ سر گرم، کار سوار نوسربازوں نے خود کو آر ٹی آفیسر ظاہر کر کے للِہ انٹر چینج کے قریب ڈرائیور سےایک لاکھ چالیس ہزار ہتھیانے کے بعد فرار ہو گئے۔
تفصیلات کے مطابق تحصیل پنڈدادنخان میں گزشتہ ماہ سے نوسر باز گروپ متحرک ہے جوکہ متعدد کامیاب واردتیں کرکے سادہ لوح افراد سے لاکھوں لے اڑے۔
گزشتہ روز سفید رنگ کی XLIکار میں سوار چار نوسربازوں نے للِہ انٹر چینج کے قریب اسلم نامی ڈرائیور سےایک لاکھ چالیس ہزارروپے ہتھیا لئے۔ نوسربازوں نے اسلم نامی ڈرائیور جوکہ شاہ زور گاڑی پر سلنڈروں کی سپلائی کےبعد واپس للِہ ٹاون جا رہا تھاکو للِہ انٹر چینج کے قریب روک کرخود کو آر ٹی سیکرٹری بن کر روکا۔
نوسرباز نے ڈرائیور کو کاغذات چیک کروانے کاکہاجس پر اسلم نامی ڈرائیور نے کاغذات چیک کرانے کے لئے گاڑی روکی تو نوسربازوں نے اسکو ساتھ گاڑی میں بیٹھا لیا۔ انٹر چینج سے تھوڑا آگے جا کر ڈرائیور سے ایک لاکھ چالیس ہزارروپے، موبائل فون، گاڑی کی چابی لے لی اور رقم لوٹنے کے بعد نوسرباز گاڑی کے کاغذات اور موبائل شاہزور گاڑی میں پھینک کر فرار ہوگئے۔
نوسر باز گروپ عرصہ دراز سے علاقے میں سرگرم ہے۔ تحصیل بھر میں نوسر باز گروپ متعدد کامیاب وارداتیں کرچکا ہے جبکہ پنڈدادنخان کے علاقہ جلالپورشریف میں نقب زنی کی واردات میں نامعلوم چور کی نقب لگاکر جیولری کی دکان میں بڑا ہاتھ مارنے کی کوشش، سیف الماری کا لاکر نہ کھلنے پر ناکامی کا منہ دیکھنا پڑا۔
پنڈدادنخان کے قصبہ جلالپورشریف کے مین بازار میں قائم بشیر جیولرز کی دکان میں گزشتہ رات نامعلوم چور دکان کی پچھلی دیوار میں نقب لگا کرداخل ہوا اور لاکر کھولنے کی کوشش کرتا رہا بارہا کوشش کے باوجود لاکر نہ کھلا جبکہ دکان میں لگے۔ کیمروں کی سی سی ٹی وی فوٹیج کی مدد سے ملزم کی شناخت کی جا سکتی ہے تاہم تاحال ملزم کی شناخت عمل میں نہیں لائی جا سکی۔
یاد رہے کہ تھانہ للِہ کی حدود میں چوری ڈکیتی کی وارداتیں کرنے والے گرہوں کے خلاف ابھی تک کوئی کاروائی نہیں ہو سکی جسکے باعث جرائم پیشہ عناصر دن دیہاڑے بھی وارداتیں کرکے کے فرار ہونے میں کامیابی ہو جاتے ہیں، پنڈدادنخان کے علاقہ تھل اور جالپ میں تیزی سے بڑھتے جرائم کی وجہ سے عوام میں شدید خوف ہراس پایا جاتا ہے۔
عوامی سماجی و کاروباری حلقوں نے آر پی او راولپنڈی اور ڈی پی او جہلم رانا عمر فاروق سے مطالبہ کیا ہے متعلقہ تھانوں میں قابل اور فرض شناس عملہ کی تعیناتی کی جائے اور جرائم کی روک تھام کے لیے گشت کے نظام کو موثر بنایا جائے تاکہ عوام عدم تحفظ کا شکار نہ ہو سکیں۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button