کھیوڑہتارکین وطن

ملائیشیا میں پاکستانی کمیونٹی اور پاکستانی محنت کش افراد انتہائی کسمپرسی کا شکار ہیں۔ شہزاد خان، ملک منور اقبال

کھیوڑہ: حکومت پاکستان اور حکومت ملائیشیا سے انتہائی درد مندانہ اپیل کرتے ہیں کہ موجودہ صورتحال میں جب کہ پوری دنیا میں کورونا وائرس نے تباہی مچائی ہوئی ہے ۔ دنیا کا نظام درہم برہم ہو چکا ہے ۔ ہر طرح کا کاروبار دنیاوی سسٹم اور زندگی سے منسلک ہر نظام منجمد ہو گیا ہے ۔ انسانوں کو گھروں میں قید کر دیا گیا ہے جو شخص جہاں ہیں جیسے ہیں مکمل طور پر بند ہو گئے ہیں۔
ان خیالات کا اظہار شہزاد خان معروف بزنس و رہنما پی ٹی آئی کوآرڈینیٹر ملائیشیا اور معروف بزنس مین رہنما پی ٹی آئی ملائیشیا ملک منور اقبال اعوان نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے۔ انہوں نے کہا کہ ہم اپنی ذاتی حیثیت میں پاکستانی کمیونٹی جس میں فیملیز اور پاکستانی محنت کش افراد جو انتہائی کسمپرسی کا شکار ہیں انکو راشن اور دیگر ضروریات زندگی فراہم کر رہے ہیں۔
انہوں نے کہا کہ ملائیشیامیں ایک محتاط اندازے کے مطابق ڈیڑھ سے دو لاکھ پاکستانی کمیونٹی اپنی زندگی بسر رہی ہے جس میں ایک بڑی تعداد میں لیبر طبقہ ہے جو اس نازک وقت میں بالکل بے سہارا ہو کر رہ گئے ہیں مالکان انھیں لاوارث چھوڑ کر اپنے گھروں میں بیٹھ گئے ہیں ۔ ان کی نظام زندگی معطل ہو کر رہ گئی ہے ۔ لیکن یہ لاکھوں لوگ بھوک اور افلاس کا شکار ہو گئے ہیں ۔ انکی کوئی ادارہ مدد نہیں کر رہا ہے ۔
انہوں نے کہا کہ ہمارے ایک سروے کے مطابق ایک بہت بڑی تعداد پاکستان واپس جانا چاہتی ہے۔ لیکن وہ اب ملائیشیا میں غیر قانونی طور پر رہ رہے ہیں ۔ انھیں خطرہ ہے کہ ملائیشیاگورنمنٹ انہیں گرفتار کر کے جیلوں میں ڈال دے گی ۔
انہوں نے کہا کہ ہم حکومت پاکستان اور حکومت ملائیشیا سے پر زور اپیل کرتے ہیں کہ آپ ملائیشیا گورنمنٹ سے مذاکرات کریں اور ان لوگوں کی واپسی بغیر جرمانے اور بغیر گرفتاریوں کے عمل میں لائیں یہ وقت کی بہت بڑی ضرورت کہ اس مشکل گھڑی میں پاکستانی بھائیوں کا ساتھ دیں اس کام میں تاخیر ہوئی تو شدید نقصان پہنچا سکتا ہے ۔ لہٰذا جتنا جلدی ہوسکے اس مسئلہ پر پاکستان اور ملائیشیا حکومت مل کر ایکشن لیں تاکہ اس مشکل گھڑی میں مظلوم افراد کی فوری واپسی کا بندوبست کیا جا سکے ۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button