جہلم

ملعونہ آسیہ کو کسی قسم کی رعایت دی گئی تو نقصان کی ذمہ دار حکومتِ وقت ہو گی، پیر سید عرفان امیر شاہ بخاری

جہلم: پیر سید عرفان امیر شاہ بخاری سرپرستِ اعلیٰ تحریکِ لبیک پاکستان،ضلع جہلم کی زیرِ قیادت سزا یافتہ آسیہ مسیح کی پھانسی کیلئے عظیم الشان احتجاجی ریلی کا انعقاد، کثیر تعداد میں عوام کی شرکت،سوہاوہ تا جہلم عوام کی بڑی تعداد شریک ہوئی، ملعونہ آسیہ مسیح کو کسی قسم کی رعایت دی گئی تو نقصان کی ذمہ دار حکومتِ وقت ہو گی،پیر سید عرفان امیر شاہ بخاری۔

تفصیلات کے مطابق ہائی کورٹ و سیشن کورٹ سے سزا یافتہ آسیہ مسیح کی سزا پر عمل درآمد اور متوقع حکومتی سازش کے خلاف پیر سید عرفان امیر شاہ بخاری کی زیرِ صدارت سوہاوہ تا جہلم عظیم الشان احتجاجی ریلی کا انعقاد کیا گیا،جس میں علامہ صاحبزادہ عثمان بشیر نقشبندی،پیر سید تنزیل الرحمٰن شاہ سمیت علماء کرام اور عوام الناس کی کثیر تعداد نے شرکت کی۔

سوہاوہ تا جہلم عوام کی بڑی تعداد نے شرکت کی،سارا علاقہ لبیک یا رسول اللہﷺ کے فلک شگاف نعروں سے گونج اٹھا۔ریلی سوہاوہ سے شروع ہوئی اور براستہ دینہ جہلم اختتام پذیر ہوئی۔پیر سید تنزیل الرحمن شاہ اور علامہ عثمان بشیر نقشبندی کا کہنا تھا کہ بظاہر حکومتی رویہ اس بات کی واضح دلیل ہے کہ حکومت آسیہ مسیح کو رعایت دینے کے حق میں ہے۔اگر ایسا ہوا تو پاکستان میں ہر والا ہر انسان سراپا احتجاج ہو گا اور اس کی ذمہ داری حکومتِ وقت اور عدلیہ پر ہو گی۔

خصوصی خطاب کرتے ہوئے پیر سید عرفان امیر شاہ بخاری کا کہنا تھا کہ اگر حکومتِ وقت نے آسیہ مسیح کے معاملے میں تھوڑا سا بھی کمپرومائز کیا تو یہ غلامانِ مصطفیٰؐ رکنے والے نہیں ہیں۔ہم امن چاہتے ہیں،ہم اہلسنت و جماعت امن والے ہیں ،لیکن جب باری آ جائے آقاﷺ کی ناموس کی تو یہ جان دینے سے بھی گریز نہیں کرتے۔آخر میں ملک و ملت کیلئے خصوصی دعا کی گئی۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button