محکمہ تعلیم میں درجہ چہارم کی خالی درجنوں سے زائد آسامیوں پر ڈیڑھ سال بعد بھی بھرتی نہ ہو سکی

0

دینہ: محکمہ تعلیم میں درجہ چہارم کی خالی درجنوں سے زائدآسامیوں پر ڈیڑھ سال بعد بھی بھرتی نہ ہو سکی، ضلع جہلم کی چاروں تحصیلوں میں واقع پرائمری ایلیمنٹری ہائی اور ہائیر سیکنڈری سکولوں میں چوکیدار، مالی ، نائب قاصد ، لیب اٹینڈنٹ اور خاکروبوں کی درجنوں سے زائدآسامیاں تقرری کی منتظر ہیں ڈیڑھ سال پہلے محکمہ تعلیم نے خالی آسامیوں پر بھرتی کے لئے ضلع جہلم کے سینکڑوں امیدواروں سے درخواستیں طلب کرنے کے بعد انٹرویو کا مرحلہ بھی مکمل کیا تھا مگر بھرتی کا عمل منطقی انجام کونہ پہنچا ۔
تفصیلات کے مطابق محکمہ تعلیم میں درجہ چہارم کی درجنوں سے زائد خالی آسامیوں پر ڈیڑھ سال کا طویل عرصہ گزرنے کے بعد بھی بھرتی نہ ہو سکی، جس کیوجہ سے ملازمتوں کے خواہشمند مرد و خواتین امیدواروں میں شدید تشویش اور غم و غصہ پایا جاتاہے۔
ذرائع کے مطابق ضلع جہلم کی چاروں تحصیلوں میں واقع پرائمری مڈل ہائی ، ہائیرسیکنڈری سکولوں میں اس وقت چوکیدار ، نائب قاصد ، مالی ، خاکروب، لیب اٹینڈنٹ و دیگر کی لگ بھگ درجنوں سے زائد آسامیاں خالی ہیں مذکورہ آسامیاں خالی ہونے کے باعث سکولوں کے سرابراہان کو شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑرہاہے۔
بے روزگار نوجوانوں نے وزیراعلیٰ پنجاب صوبائی وزیر تعلیم سیکرٹری تعلیم ، کمشنر راولپنڈی، ڈپٹی کمشنر جہلم اور سی او تعلیم سے نوٹس لینے کا مطالبہ کیا ہے۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.