دو دن قبل جہلم سے اغواء ہونے والے 23 سالہ نوجوان کی لاش دینہ سے برآمد

0

دینہ: دو دن قبل جہلم سے اغواء ہونے والے 23 سالہ نوجوان کی لاش دینہ سے برآمد، منگلا پولیس نے لاش پوسٹمارٹم کیلئے ہسپتال منتقل کر دی۔

تفصیلات کے مطابق مخدوم آباد جہلم کا رہائشی پولیس ملازم آصف حسین ولد چوہدری فضل حسین نے تھانہ صدر پولیس کو درخواست دیتے ہوئے بتایا کہ 2 اپریل کو میں اپنی فیملی کے ہمراہ گھر میں موجود تھا کہ 3 بجے دن کو مسمی نوشاب جیلانی ولد غلام جیلانی سکنہ چک اکا دینہ نے دستک دی کہ وقار حسین سے ضروری کام ہے اس کے باہر بھجوائیں۔

انہوں نے درخواست میں موقف اختیار کیا کہ وقار حسین نوشاب کی کار نمبری BW/531 میں بیٹھ کر چلا گیا جبکہ میں اپنی ڈیوٹی پر چلا گیا جب میں رات کو گھر واپس آیا تو والدہ نے بتایا کہ وقار حسین ابھی تک گھر واپس نہیں آیا جس کی میں نے تلاش شروع کر دی لیکن وہ نہیں ملا میرے بھائی وقار حسین کو مسمی نوشاب جیلانی نے نامعلوم وجوہات کی بنا پر اغواء کر لیا جس پر پولیس نے نوشاب جیلانی کے خلاف مقدمہ درج کر لیا۔

دو دن بعد 4 اپریل بروز جمعرات کو وقار حسین ولد چوہدری فضل حسین کی لاش چک اکا دینہ کے قریب آشیانہ ہاؤسنگ کے قریب تھانہ منگلا کی حدود سے برآمد ہوئی، پولیس تھانہ منگلا نے لاش کو پوسٹمارٹم کے لئے سول ہسپتال بھیج دیا۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.