جہلماہم خبریں

جہلم میں فائرنگ سے جاں بحق ہونے والا نوجوان سپرد خاک، مضروبہ والدہ کی مدیت میں مقدمہ درج

جہلم: ٹارگٹ کلنگ، فائرنگ سے جاں بحق ہونے والے پاکستانی نژاد برطانوی نوجوان کی نماز جنازہ ادا کر دی گئی،مضروبہ والدہ کی مدیت میں مقدمہ درج،تفتیش شروع کر دی گئی۔
رپورٹ کے مطابق جمعرات کی صبح نو بجے پاکستانی نژاد برطانوی شہری جہانگیر حسین عرف جنگی بلال ٹاؤن مہدی ہاؤس اپنی رہائش گاہ سے والدہ تسنیم کوثر کے ہمراہ گاڑی میں سوار ہو کر عدالت جانے لگا تو گاڑی کا دروازہ کھول کر مسلح شخص نے ٹارگٹ کلنگ کا نشانہ بنایا۔

جہانگیر حسین کے سر میں گولی لگی جب کہ اسکی والدہ کے چہرے پر گولی لگی، برطانوی نوجوان زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے ہولی فیملی اسپتال راولپنڈی پہنچ کر زندگی کی بازی ہار گیا جبکہ اسکی والدہ کی حالت خطرے سے باہر ہے۔ مقتول کا سول اسپتال جہلم میں پوسٹمارٹم کیا گیا اور مقتول کے بھائی قدیر حسین کے برطانیہ سے جہلم پہنچنے پر قانونی کارروائی کے بعدنعش اسکے حوالے کی گئی۔
مقتول کے بھائی قدیر حسین کے سول اسپتال پہنچنے پر رقت آمیز مناظر تھے بھائی نے مقتول بھائی کی نعش دیکھتے ہی دھاڑیں مار مار کر رونا شروع کر دیا،مقتول جہانگیر حسین کی نماز جنازہ جنتی جنازہ گاہ کالا گجراں میں ادا کی گئی جس میں سیاسی،سماجی،کاروباری اور مذہبی شخصیات سمیت معززین علاقہ نے کثیر تعداد میں شرکت کی،مقتول کو کالا گجراں قبرستان میں سپرد خاک کیا گیا۔

علاوہ ازیں تھانہ سول لائن پولیس نے مقتول کی والدہ کی مدعیت میں مقدمہ درج کر کے تفتیش شروع کر دی ہے،مقتول کی والدہ کا موقف ہے کہ اسکے خاوند شبیر حسین نے دوسری شادی کی ہوئی ہے اور وہ دوسری بیوی،بچوں کے ساتھ رہتا ہے،میرے خاوند کی بھائی افضل وغیرہ کے ساتھ دیوانی مقدمہ سول عدالت میں چل رہا ہے۔ ہم عدالت جانے کے لیے گاڑی میں بیٹھے تو ایک شخص گاڑی کے پاس آیا اور کہا کہ تم لوگوں نے افضل وغیرہ کے خلاف جو کیس کیا ہوا ہے آج تمہیں اسکا مزہ چکھاتا ہوں اور ہم پر فائرنگ شروع کر دی۔
مقتول کی والدہ نے ایف آئی آر درج کرواتے ہوئے بتایا کہ مجھے قوی یقین ہے کہ یہ وقوعہ افضل،بشری زوجہ شبیر،طیب ولد شبیر،شعیب شبیر نے کروایا ہے،تھانہ سول لائن پولیس نے مقدمہ درج کر کے تفتیش شروع کر دی ہے۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button