سوہاوہاہم خبریں

سوہاوہ کا ایک اور سپوت وطن پر قربان، پورے فوجی اعزاز کے ساتھ سپرد خاک

سوہاوہ(پروفیسر افتخار احمد+احسن وحید سے)سوہاوہ کا ایک اور سپوت وطن کی مٹی پر قربان، سوات خود کش حملے میں شہید ہونے والے نائب صوبیدار زاہد علی کو آبائی گائوں دئیوال میں پورے فوجی اعزاز کے ساتھ سپرد خاک کر دیا گیا ۔ میت گائوں دئیوال پہنچی تو رقت آمیز مناظر دیکھنے میں آئے ۔ 37سالہ نائب صوبیدار زاہد علی شہید کے پسماندگان میں بیوہ ، دو بیٹیاں اور ایک بیٹا شامل ہے۔

تفصیلات کے مطابق گزشتہ روز سوات خود کش حملے میں نواحی علاقہ دئیوال کے رہائشی تاسب علی کا بیٹا نائب صوبیدار زاہد علی بھی شہید ہو گیا تھا ۔ سہ پہر چار بجے کے بعد شہید کا جسد خاکی جب گائوں دئیوال تحصیل سوہاوہ پہنچا تو کئی رقت آمیر مناظر دیکھنے کو ملے ۔ بچوں اور دیگر کے سامنے صرف دیڑھ گھنٹے شہید کی میت موجود رہی شام ساڑھے پانچ بجے دئیوال کی بڑی جنازہ گاہ میں شہید کی نماز جنازہ ادا کی گئی ۔

شہید زاہد علی کی عمر 37سال بتائی گئی شہید کے پسماندگان میں بیوہ ، دو بیٹیاں اور ایک بیٹا شامل ہے ۔ شہید کے نماز جنازہ کے بڑے اجتماع میں علاقہ بھر سے سیاسی سماجی شخصیات کے علاوہ فوجی افسران اور شہید گارڈ کا چاک و چوبند دستہ بھی شامل تھا ۔ نماز جنازہ کی امامت مرکزی جامع مسجد دئیوال کے خطیب عبدالحسیب نے کی ۔ نماز جنازہ کے بعد پاک فوج کے چاک و چوبند دستے نے شہید کے جسد خاکی کا ایک مخصوص انداز میں سلامی پیش کی اور پھولوں کے گلدستے شہید کی قبر پر چڑھائے ۔

وزیر اعلیٰ پنجاب میاں محمد شہباز شریف کی ہدایت پر ڈپٹی کمشنر جہلم اقبال حسین خان اور ڈی پی او عبدالغفارقیصرانی نے 21آرٹی ڈیو سے شہیدہونیوالے زاہد علی کی قبر پر پھولوں کی چادر چڑھائی۔ شہید ہونیوالے زاہد علی کے والدعلی اور ایم پی اے راجہ اویس خالد ، اسسٹنٹ کمشنر سوہاوہ ملک محمد اعجاز ، تحصیلدار سوہاوہ منیر خان اوراہل علاقہ سے شرکاء کثیر تعداد میں موجود تھے ۔ ڈپٹی کمشنر اقبال حسین خان نے شہید کے والد سے اظہار تعزیت اور دعائے مغفرت کی۔ انکا کہنا تھا کہ شہید زندہ جاوید ہے اسکا خون کبھی رائیگاں نہیں جائیگاشہید کے سوگواران میں بیوہ ، دو بیٹیاں اور ایک بیٹا ہیں ۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button