جہلم

بابا جادہ روڈ ٹوٹ پھوٹ کا شکار، جگہ جگہ گڑھے بن گئے، شہریوں کی نئی گاڑیاں کھٹارہ بننے لگیں

جہلم: بابا جادہ روڈ ٹوٹ پھوٹ کا شکار ، جگہ جگہ گڑھے بن گئے، شہریوں کی نئی گاڑیاں کھٹارہ بننے لگیں ، منتخب عوامی نمائندوں نے ترقیاتی کاموں سے منہ موڑ لیا، شہری ن لیگی حکومت کے خلاف سراپا احتجاج، ارباب اختیار سے نوٹس لینے کا مطالبہ۔

تفصیلات کے مطابق جہلم بابا جادہ روڈ کالا گجراں تک ٹوٹ پھوٹ کا شکار ہو گئی جس کی بنیادی وجہ سیوریج لائن بچھانے کے بعد سڑک کی تعمیر نہ کرنا ہے ۔ شہریوں کی نئی گاڑیاں ،موٹر سائیکلیں کھٹارہ بنتی جارہی ہیں ، جبکہ ممبران قومی وصوبائی اسمبلی نے ترقیاتی کاموں سے لا تعلقی کا اظہار کر رکھا ہے ، جس کیوجہ سے شہری مسلم لیگی ممبران قومی و صوبائی اسمبلی کے سخت نالاں ہیں ، شہریوں کا کہنا ہے کہ این اے 62،پی پی 25 سے منتخب ممبران ترقیاتی کاموں کے حوالے سے بڑے بڑے دعوے کرتے دکھائی دیتے ہیں جبکہ عملی طور پر کام صفر ہے۔

شہریوں نے اخبار نویسوں سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ موجودہ مسلم لیگ ن کا دور دعوؤں تک محدود رہا ہے بلند و بانگ نعروں کے علاوہ ہمارے حکمران کسی قسم کا کوئی بھی ترقیاتی کام نہیں کروا سکے ، جس کیوجہ سے علاقہ مکینوں نے فیصلہ کیا ہے کہ آمدہ عام انتخابات میں مسلم لیگ کے علاوہ کسی بھی جماعت سے تعلق رکھنے والے امیداروں کو بھاری اکثریت سے کامیاب کروائیں گے کیونکہ لیگی ممبران کے زہنوں میں نقش ہو چکا ہے کہ مسلم لیگ ن جس بھی امیدوار کو ٹکٹ جاری کرے گی وہ بھاری اکثریت سے کامیاب ہو سکتا ہے۔

شہریوں کا موقف ہے کہ جہلم سے ملحقہ آبادیوں آج کے ترقی یافتہ دور میں سوئی گیس جیسی نعمت سے محروم چلی آرہی ہے ، جبکہ ہمارے ممبران نے سوہاوہ اور دینہ میں سوئی گیس فراہم کرنے کے دعوے کرنے شروع کر رکھے ہیں جن کا حقیقت سے دور ،دور تک کوئی واسطہ نہ ہے ۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button