جہلم

جہلم شہر اور گردونواح میں آٹے اور چینی کے بعد سبزیوں کو بھی پر لگ گئے

جہلم: شہر اورگردونواح میں آٹے اور چینی کے بعد سبزیوں کو بھی پر لگ گئے، ضلعی انتظامیہ چینی کے عدالتی نرخوں پر چینی فروخت کروانے میں ناکام ، کھلے عام آٹا اور چینی مہنگے داموں فروخت ہورہا ہے ، شہریوں نے سرکاری نرخوں پراشیاء خوردونوش فروخت کروانے کا مطالبہ کر دیا۔

تفصیلات کے مطابق آٹا اور چینی کے بحران کے بعد اب سبزیوں کے نرخ بھی آسمانوں سے باتیں کر رہے ہیں ، چھوٹا گوشت اور بڑا گوشت بھی زائد نرخوں پر فروخت کیا جا رہا ہے جبکہ سبزی منڈی میں سبزیوں کی قیمتوں میں 50 فیصد اضافہ کرکے فروخت کی جارہی ہیں، سبزی فروشوں کوکوئی پوچھنے والا نہیں۔

شہریوں کا کہنا ہے کہ وفاقی حکومت نے شہریوں پر پٹرول بم، آٹا بم، گندم بم اور اب چینی بم گرا دیا ہے ، شہر بھر میں ہول سیل میں 100 روپے فی کلو چینی فروخت ہو رہی ہے ، جبکہ پرچون میں110 روپے فی کلو چینی فروخت کی جارہی ہے۔

شہریوں کا کہنا ہے کہ ہول سیل ڈیلرز کے خلاف کارروائی کیوں نہیں کی جارہی ، چینی ہو ل سیل ڈیلرز کھلے عام100 روپے فی کلو کے حساب سے فروخت کر رہے ہیں جبکہ انتظامیہ چھوٹے دکانداروں کو 84 روپے فی کلو فروخت کرنے کے احکامات جاری کئے ہوئے ہے۔

شہریوں نے وزیراعلیٰ پنجاب ، چیف سیکرٹری پنجاب سے سرکاری نرخوں پر اشیاء خوردونوش فروخت کروانے اور سرکار ی نرخ ناموں پر سختی سے عملدرآمد کروانے کا مطالبہ کیا ہے۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button