سوہاوہ میں گوشت کی قیمتوں میں اضافہ، عوام لاغر اور بیمار جانوروں کا گوشت کھانے پر مجبور

0

پڑی درویزہ: تحصیل صدر مقام سوہاوہ شہر میں چھوٹے اور موٹے گوشت کے نرخ آسمان سے باتیں کرتے ہیں ، صارفین لاغر اور بیمار جانوروں کا گوشت کھانے پر مجبور، کوئی سرکاری ادارہ پوچھنے والا نہیں، شہریوں کی طرف سے ڈی سی ضلع جہلم سے نوٹس لینے کا مطالبہ ۔

تفصیلات کے مطابق تحصیل صدر مقام سوہاوہ شہر میں چھوٹا بکرے کا گوشت مبلغ 800/-روپے فی کلو گرام اور موٹا گوشت مبلغ 400/-روپے فی کلو گرام کھلے عام فروخت ہو رہا ہے ۔ تحصیل انتظامیہ میں موجود پانچ میں سے ایک ادارہ بھی ان لٹیروں کو پوچھنے والا نہیں ہے ۔

شہریوں کے مطابق دستیاب گوشت لاغر اور بیمار جانوروں کا فروخت کیا جاتا ہے ۔ صارفین نے وضاحت کرتے ہوئے بتایا کہ تحصیل انتظامیہ میں وٹرنری انچارج ، تحصیل ہیڈ کوارٹر ہسپتال کا انچارج ڈاکٹر ، ہیلتھ انسپکٹر ، مونسپل کمیٹی کا نمائندہ اور نام نہاد فوڈ اتھارٹی موجود ہونے کے باوجود سوہاوہ گردو نواح کے شہری لاغر اور بیمار جانوروں کا مہنگا گو شت کھانے پر مجبور ہیں ۔ سوہاوہ کے شہریوں نے ڈپٹی کمشنر ضلع جہلم سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ صورت حال کا از خود نوٹس لیتے ہوئے مسئلے کو حل کریں ۔

شہریوں کا کہنا ہے ڈپٹی کمشنر ضلع جہلم کو علم ہونا چاہیے کہ گزشتہ روزموصوف کی طرف سے تحصیل سوہاوہ کے دورے کو اس قدر خفیہ رکھا گیا کہ مقامی میڈیا تک اطلاع نہیں کی گئی انتظامیہ نے اندرونی طور پر ڈپٹی کمشنر کو ’’سب اچھا‘‘ کی رپورٹ دے دی ۔ اگر سوہاوہ میں عوامی کھلی کچہری کا انتظام کیا جاتا تو ڈی سی ضلع جہلم کے سامنے عوامی مسائل کی پٹاری کھل جاتی اور انتظامیہ کو لینے کے دینے پڑ جاتے ۔

سوہاوہ کے شہری سماجی حلقوں کا کہنا ہے کہ بیان بالا چھوٹے اور بڑے گوشت کے معیار اور بے ہنگم نرخوں کاوہ خود نوٹس لیں ذمہ داران کے خلاف واقعی انضباطی کاروائی عمل میں لائی جائے ۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.