مہنگائی میں پسے عوام پر وار پروار؛ بجلی، ادویات، آٹا، گھی، چینی، دالوں کی قیمتیں آسمان کو چھونے لگیں

0

جہلم: مہنگائی میں پسے عوام پر حکومت اور منافع خوروں کے وار پروار؛ بجلی ،ادویات ،آٹا ، گھی ، چینی ، دالوں کی قیمتیں آسمان کو چھونے لگیں ۔حکومت کی طرف سے مہنگائی کنٹرول نہ ہونے پر ذخیرہ اندوزوں اور منافع خوروں کو کھلی چھٹی مل گئی ۔انتظامی افسران کی طرف سے سب اچھا ہے کی رپورٹوں سے غریب عوام پر مایوسیوں کے سائے طویل تر ہونے لگے ۔

ملک کے دیگر شہروں کی طرح جہلم ضلع بھر میں بھی بدترین مہنگائی کا طوفان برپا ہے ۔ بڑھتی ہوئی مہنگائی سے شہری بلبلااٹھے ہیں ،حکومتی دعوؤں کے باوجود مقامی انتظامیہ کی بے حسی کی وجہ سے کمیشن ایجنٹس مہنگائی مافیا کو لوٹ مار کی کھلی چھوٹ دے رکھی ہے ۔ بازارمیں سبزیوں کی قیمتوں میں کمی نہ لائی جا سکی ،منافع خور مافیا کی من مانیاں برقرار ہیں۔

سرکاری نرخ ناموں میں ٹماٹر کی قیمت 60 روپے سے 65روپے مقرر ہے ،جبکہ سبزی منڈی میں ٹماٹر90روپے فی کلو کے حساب سے فروخت ہو رہا ہے جبکہ دکانوں پر ٹماٹر105 سے 115روپے فی کلو کے حساب سے فروخت ہو رہا ہے ۔مٹر90روپے کی بجائے 115 روپے،پیاز 45 روپے کی بجائے60روپے ،آلونیا42روپے کی بجائے 50روپے میں فروخت کیا جارہا ہے ۔

گوبھی 45روپے کی بجائے 60 روپے،شلجم25 روپے کی بجائے 40روپے،شملہ مرچ120 روپے کی بجائے 150 روپے اسی طرح کھیرا ،گاجر ،مولی ،لہسن ،ادرک ، مہنگے داموں فروخت ہورہے ہیں ۔

شہرمیں پرائس کنٹرول چیکنگ کے نام پر خانہ پری کی جارہی ہے ، بڑے افسروں نے پرائس کنٹرول چیکنگ کو اپنی توہین سمجھتے ہوئے درجہ چہارم کے ملازمین کو ڈیوٹیاں سونپ رکھی ہیں، جو مال بناؤ ڈنگ ٹپاؤ پالیسی پر گامزن ہیں ۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.