جہلم

قانون اور میرٹ کے مطابق لوگوں کو ریلیف دینا ہماری ذمہ داری میں شامل ہے۔ ڈی پی او جہلم

جہلم: عوام کی شکایات سن کر قانون اور میرٹ کے مطابق ان کو ریلیف دینا ہماری ذمہ داری میں شامل ہے جس کے لیے میں سائلین کی خود شکایات سنتا ہوں اور ان کو درپیش مسائل حل کرتا ہوں۔
ان خیالات کا اظہار ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر جہلم رانا عمر فاروق نے شکایات سیل کی طرف سے پیش ہونیوالی شکایات کے ضمن میں تفصیلی بات کرتے ہوئے کیا اس موقع پر شکایت سیل کے انچارج عبدالغفور بٹ اور پی آر او محمد عدیل بھی موجود تھے۔
ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر جہلم رانا عمر فاروق نے کہاکہ شکایت سیل کی کارکردگی ہر لحاظ سے بہتر ہے کیونکہ شکایت سیل کے انچارج ایک فرض شناس آفیسر ہیں جو شکایات لیکر آنیوالے سائلین سے پہلے تمام معاملات سن کر اس کے ضمن میں ایک مختصر سی رپورٹ بناتے ہیں جس کو سامنے رکھتے ہوئے سائل سے میں خود ان کے مسائل دریافت کرتا ہوں اور موقع پر ان سے ہونیوالی زیادتی کے ضمن میں ازالہ کیلئے احکامات جاری کرتا ہوں۔
انہوں نے کہاکہ ہمارے پاس روزانہ کی بنیاد پر تیس سے چالیس افراد اپنی شکایات لیکر آتے ہیں جن میں زیادہ تر وہ لوگ ہیں جن کو اپنی زمینوں پر رشتے داروں کی طرف سے کی گئی زیادتیوں پر مبنی شکایات ہوتی ہیں تو ان درخواستوں پر متعلقہ ایس ڈی پی اوز اور ایس ایچ اوز کو فوری حل کیلئے احکامات جاری کیے جاتے ہیں اور ان کی مقرر کردہ وقت میں کارکردگی کی رپورٹ بھی لی جاتی ہے جبکہ اوورسیز پاکستانیوں کے لیے ایک علیحدہ شعبہ قائم کیا گیا ہے جس میں ان کی شکایات کا ازالہ ترجیحی بنیادوں پر کیا جاتا ہے۔
ڈی پی او جہلم رانا عمر فاروق نے کہا کہ لوگوں سے لی گئی رقوم کے جو چیک دیئے جاتے ہیں اور وہ بینک ڈس آنر ہو جاتے ہیں کوشش کی جاتی ہے کہ دونوں پارٹیاں مل بیٹھ کو اس مسئلے کو شکایت سیل انچارج کی موجودگی میں ازخود حل کریں تا کہ وہ عدالتوں کے چکر لگانے سے بچ سکیں تاکہ عدالتوں پر بھی غیر ضروری بوجھ نہ پڑے جس سے زیادہ تر معاملات دونوں پارٹیوں کی مشاورت سے حل ہو جاتے ہیں۔
انہوں نے کہاکہ جہاں پولیس کا کام جرائم پیشہ افراد کے خلاف قانونی کاروائی کرنا ہے وہاں معززین شہر کے معاملات کو ترجیحی بنیادوں پر حل کرکے انہیں ریلیف بھی دینا ہے ایک سوال پر انہوں نے کہاکہ جونہی موسم تبدیل ہوتا ہے اس کے ساتھ پنجاب کے ہر ضلع میں جرائم کی رفتار میں اضافہ ہوتا ہے۔
ڈی پی او جہلم رانا عمر فاروق نے کہا کہ ضلع جہلم کی پولیس جس طرح میرے احکامات پر ایک جامع حکمت عملی بنا کر جرائم پر قابو پا رہی ہے کیونکہ میری اولین ترجیحات میں منشیات فروشی کا خاتمہ، قمار بازی کے اڈے ختم کرنا اور ناجائز اسلحہ برداروں کے ساتھ ساتھ اشتہاری و عدالتی ملزمان کی گرفتاری ہے جس میں ہمیں اللہ کے فضل و کرم سے کامیابی حاصل ہورہی ہے جبکہ میرا اور میری ٹیم کا مشن ضلع جہلم کے لوگوں کو امن و امان کی فراہمی کے ساتھ ساتھ اس ضلع کو امن کا گہوارہ بنانا ہے جس میں عوام کی معاونت سے انشاء اللہ کامیاب ہوں گے۔
انہوں نے کہاکہ میں نے ضلع میں کرپشن کا باب بند کردیا ہے اگر کسی کو بھی کسی کے خلاف ثبوت سمیت کوئی شکایت ہے تو بلا جھجھک میرے دفتر میں آئے انشاء اللہ اس پر بدعنوان کو محکمہ میں نہیں رہنے دیا جائے گا۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button