جہلماہم خبریں

اشیائے خوردو نوش کی قیمتوں میں خو د ساختہ اضافہ کسی صورت قابل قبول نہیں۔ ڈپٹی کمشنر سیف انور

جہلم: اشیائے خوردو نوش کی قیمتوں میں خو د ساختہ اضافہ کسی صورت قابل قبول نہیں، ایڈیشنل ڈائریکٹر لائیو سٹاک معیاری گوشت کی فراہمی کو یقینی بنانے کے لئے چیکنگ کریں ، جہلم کی چاروں تحصیلوں میں کسی کو ناجائز منافع خوری کی ہر گزاجازت نہیں دی جائے گی، دودھ میں ملاوٹ کی شکایت عوام ڈی سی اور اے سی دفتر میں درج کروائیں، اسسٹنٹ کمشنرز اپنی اپنی تحصیل میں نگرانی کریں گے۔
یہ ہدایات ڈپٹی کمشنر جہلم محمد سیف انور جپہ نے اشیائے خوردو نوش کی از سر نو تعین کے سلسلہ میں پرائس کنٹرول کمیٹی کے ماہانہ جائزہ اجلاس کی صدارت کرتے ہو ئے دیں۔ اجلاس میں،اے سی جہلم فیضان احمد،اے سی دینہ شہزاد محبوب ڈی او انڈسٹریز محمد سعید، حاجی شکیل احمد بھٹہ،صدر انجمن تاجراں چوہدری محمد عارف ،ایڈیشنل ڈائریکٹر لائیو اسٹاک سید کمال ناصر، سیکریٹری مارکیٹ کمیٹی اور دیگر شریک تھے ۔
ڈپٹی کمشنر محمد سیف انور جپہ نے کہا کہ تاجر برادری انتظامیہ سے تعاون کرے اور پرائس کنٹرول کمیٹی کی طرف سے مقرر کردہ قیمتوں پر اشیائے خوردونوش کی فروخت کو یقینی بنائیں۔ خلاف ورزی کرنے والوں سے سختی سے نمٹا جائیگا، انہو ں نے کہا کہ ریٹ تاجر نمائندوں کی مشاورت سے مقرر کیے جاتے ہیں اور تاجر نمائندوں کی زمہ داری ہے کہ وہ دوکاندروں کو بھی آگاہ کریں کہ خلاف ورزی کی صورت میں انہیں جرمانے کا سامنا کر نا پڑے گا۔
انہوں نے مزید کہا کہ پرائس کنٹرول مجسٹریٹس بڑی مارکیٹوں، جنرل سٹورز کے ساتھ ساتھ گلی محلوں اور دیہی علاقوں میں بھی بھرپور کاروائیاں کریں۔ مضر صحت اور ملاوٹ شدہ گوشت، دودھ، مرچ،مصالحہ جات اور دیگر اشیاء بیچنے ، بنانے والے قوم کے دشمن ہیں جن سے کوئی رعایت نہیں برتی جائے گی۔
ڈپٹی نے بتایا کہ تاجروں نمائندوں کی مشاورت سے چکی سے خریدا جانے والا آٹا 760 روپے فی 20 کلومقرر کیا گیا جبکہ چینی کی قیمت 58 روپے فی کلو، باسمتی چاول115روپے فی کلو،باسمتی چاول135روپے فی کلو، دال ماش 120 روپے فی کلو،دال مسور موٹی 80روپے فی کلی،دال مسور باریک 90 روپے فی کلو مہیا کی جائے گی۔
انہوں نے بتایا کہ دال چنا موٹی105 روپے فی کلو ، دال چنا باریک 100روپے فی کلو، سفید چنا لوکل سندھی92 روپے فی کلو،سفید چنا 8 ایم ایم 118 روپے فی کلو،بیسن 115 روپے فی کلوجبکہ،لال مرچ 350روپے فی کلوکے حساب سے مہیا ء کی جائے گی، دودھ 80 روپے ، دہی 85 روپے کے حساب سے فروخت کیا جائے گا تاہم معیار پر ہرگز سمجھوتہ نہیں کیا جا ئے گا۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button