جہلمتارکین وطن

پی ٹی آئی فرانس کی اہم جنرل میٹنگ، انٹرا پارٹی الیکشن، اوورسیز پاکستانیوں کو ووٹ کا حق دینے پر تبادلہ خیال

پیرس/ جہلم: پاکستان تحریک انصاف فرانس کی جانب سے تحریک انصاف پیرس فرانس نے اہم جنرل میٹنگ کا انعقاد کیا۔

پروگرام کا باقاعدہ آغاز تلاوت قرآن پاک سے ہوا جبکہ ہدیہ نعت رسول ﷺ پیش کی گئی۔ میٹنگ کا ایجنڈا یاسر قدیر نے پیش کیا، میٹنگ میں کثیر تعداد میں سابق عہدیدارن و ممبران مرد و خواتین نے شرکت کی۔ میٹنگ میں تحریک انصاف فرانس کی مجموعی صورتحال آنے والے انٹرا پارٹی الیکشن، اوورسیز پاکستانیوں کو ووٹ کا حق دینے پر تفصیلی تبادلہ خیال کیا گیا۔

سابق صدر پی ٹی آئی فرانس ملک عابد نے تقریر کرتے ہوئے کہا کہ سب سے پہلے میں سب احباب کا شکریہ ادا کرتا ہوں کہ انہوں نے مجھ پر اعتماد کرتے ہوئے مجھے بلا مقابلہ صدر منتخب کیا تھا، اب آنے والے انٹرا پارٹی الیکشن میں میں اپنی ٹیم کا بھرپور ساتھ دینے کا عزم کرتا ہوں اور چاہتا ہوں کہ جس کے بھی میرے سمیت کسی سے بھی اختلافات ہیں انہیں آج اس میٹنگ میں ختم کیا جائے اور متحد ہو کر پاکستان اور تحریک انصاف کے لیئے اپنی اپنی خدمات سر انجام دینی چاہیئے۔

تحریک انصاف فرانس کے سینئر راہنما و سابق صدر میاں ذوالفقار جتالہ نے تقریر کرتے ہوئے کہا کہ ہمارا مقصد پاکستان کی ترقی میں اپنا کردار ادا کرنا ہے سب کو مل کر اپنا اپنا مثبت کردار ادا کرنا ہو گا، انٹرا پارٹی الیکشن میں دو دھڑے میدان میں آتے ہیں، ایک جیت جاتا ہے اور ایک ہار جاتا ہے مگر دونوں ایک ہی درخت کی ٹہنیاں ہیں ایک دوسرے کی عزت کریں۔

انہوں نے کہا کہ ایک دوسرے کو تسلیم کریں نا کہ ایک دوسرے کی ٹانگیں کھینچیں آپ سب کو پتا کہ کتنی محنت اور لگن سے جماعت کی ممبر سازی کی گئی ہماری تو ہمیشہ کوشش یہ رہی کہ جماعت کو مضبوط کریں تاکہ ممبرز اور کارکن اپنا نمائندہ خود چنیں یہی جمہوریت ہے میں آپ سب کو مبارک باد پیش کرتا ہوں کہ اب اوورسیز پاکستانیوں کو ووٹ کا حق مل چکا ہے اب ہم سب کی ذمہ داری مزید بڑھ گئی ہے کہ ہم پاکستان اور جماعت کے لیئے زیادہ محنت کریں۔

دیگر عہدیداران نے بھی اظہار خیال کرتے ہوئے کہا کہ ہم سب کو متحد ہوکر پاکستان اور جماعت کے لیئے کام کریں، اختلافات کو دور کریں ناراضگیاں ختم کریں تاکہ بہتر سے بہتر کام کیا جائے جو بھی اختلاف یا ناراضگی ہو اسے آپس میں مل بیٹھ کر حل کرنا چاہیئے نہ کہ سوشل میڈیا پر ایک دوسرے پر کیچڑ اچالا جائے اس سے جماعت کو سخت نقصان پہنچتا ہے، نظریاتی اختلاف ہونا چاہیئے ذاتی اختلاف نہیں۔

سینئر ممبران نے میٹنگ میں موجود تمام احباب کے اختلافات کو ختم کروایا اور مل کر کام کرنے کا اور عوامی رابطہ مہم تیز کرنے کا عزم کیا۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button