جہلماہم خبریں

جہلم میں گھریلو ملازمین کی مدد سے چوریاں کرنے والے 2 چور گرفتار، 34 لاکھ روپے برآمد

جہلم: ڈسٹر کٹ پولیس آفیسر جہلم شاکر حسین داوڑ نے پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہاکہ جون 2019چوکی کینٹ علاقہ تھانہ سٹی کے ایریا جہلم کینٹ میں ایک طرز کی دو نقب زنی کی وارداتیں ہوئیں۔ پہلی واردات مورخہ 03-06-2019کو ملزمان نے ملک عاصم کے خالی گھر میں نقب زنی کرتے ہوئے نقدی 10لاکھ و دیگرقیمتی سامان چوری کیا۔

انہوں نے بتایا کہ دوسری واردات مورخہ 23-06-2019کو ملزمان نے صفدر بیگ کا خالی گھر پا کر نامعلوم ملزمان نے ایک ہی طرز سے نقب لگاتے ہوئے رہائشی کمرہ میں داخل ہو کر سیف الماری میں سے 90لاکھ نقدی، پسٹل 30بور لائسینسی و قیمتی سامان چوری کر لیا۔

ڈی پی او جہلم نے کہا کہ ان وارداتوں کو ٹریس کرنا جہلم پولیس کے لیے ایک بہت بڑا چیلنج تھا ۔ جہلم پولیس نے نہایت محنت، لگن، جانفشانی سے ہر پہلوسے تفتیش مقدمات عمل میں لاتے ہوئے جائے وقوعہ سے نہایت مہارت کے ساتھ فنگر پرنٹس لفٹ کیے اور ٹریسنگ کے لیے نادرا آفس اسلام آباد اور PFSAلاہور ارسال کیے۔ مقدمات میں جیو فینسنگ بھی عمل میں لائی گئی۔

انہوں نے بتایا کہ مقدمات میں مشکوک گھریلو ملازمان و کینٹ ایریا کنسٹرکشن لیبر کو بھی وسیع پیمانے پر شامل تفتیش کیا گیاملزم یاسر محمود ولد محمد حسین ساکن سہال تحصیل و ضلع راولپنڈی کے فنگر پرنٹس کی تصدیق ہوئی۔ ملزم یاسر محمود مقدمات ہذا میں اشتہاری مجرم تھا جس کو مورخہ 30-12-2020کو حسب ضابطہ گرفتار کر کے باالترتیب 13یوم ریمانڈ جسمانی حاصل کیا۔

ڈی پی او شاکر حسین داوڑ نے بتایا کہ دوران ریمانڈ جسمانی ملزم سے انٹروگیشن کے دوران ملزم کے انکشاف و نشاندہی پر مسرقہ نقدی رقم مبلغ 34لاکھ روپے، مسرقہ پسٹل30بور اور آلات واردات برآمد کیے گئے۔دوسر املزم عامر حسین جوڈیشل ہے یہ گروہ گھریلو ملازمین کی مدر کی نقب زنی کی واردتین کرتا تھا۔

ڈی پی او جہلم شاکر حسین داوڑ نے شہریوں سے اپیل کرتے ہوئے کہاکہ گھریلو ملازم رکھنے سے قبل ان کی جانچ پڑتال لازم کریں اور کسی کی گارنٹی پر ملازم رکھیں۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button