اپنی ماں بولی اور ورثے کی ترویج کے لیے لوک ورثہ میوزیکل شوز کا انعقاد بے حد ضروری ہے۔ طاہر محمود نئیر

0

اولڈہم: برطانیہ میں بچوں کا اپنی ثقافت اور ماں بولی سے جڑا رہنا بہت ضروری ہے۔ ثقافتی میلے ہوں یا لوک ورثہ میوزیکل ایونٹس ہماری نوجوان نسل کو یہ اپنے کلچر سے متعارف کروانے کا باعث بنتے ہیں۔

ان خیالات کا اظہار لوک فنکار طاہر محمود نئیر نے اولڈہم کے پاکستانی کمیونٹی سنٹر میں ریڈیو سنگم اور اردو پوسٹ کے اشتراک سے سجے لوک ورثہ میوزیکل میلے میں پرفارمنس کے بعد میڈیا نمائندگان سے بات چیت میں کیا۔

ایونٹ آرگنائزر تنویر کھٹانہ، تنویر طارق اور نوید چوہان کا کہنا تھا کہ ہمارا مقصد نوجوانوں کو اپنے ورثے اور خصوصا فوک میوزک اے متعارف کروانا ہے اور ایسے ایونٹس اس میں بنیادی کردار ادا کریں گے۔

لوک ورثہ میوزیکل شو کے مہمان خصوصی مئیر آف اولڈہم جاوید اقبال بھٹی کا کہنا تھا کہ اولڈہم میں اس طرح کے ایونٹس کا انعقاد بہت ضروری ہے جو کمیونٹی کو ایک دوسرے کے قریب لائیں گے اور نوجوانوں کو بھی مثبت سرگرمی دیں گے۔ میوزیکل شو کی میزبانی کے فرائض خلیل احمد نے انجام دئیے جبکہ مقامی فنکاروں آصف کے، یاسین خان اور رضی رض نے پرفارم کیا۔

اس موقعہ پر ریڈیو سنگم کی ڈیب لانچنگ بھی کی گئی، شو کے دوران نوجوان بھنگڑے ڈالتے رہے، جبکہ طاہر نئیر اوردیگر فنکاروں کی پرفارمنسز سے شرکاء بھی بے حد محظوط ہوئے۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.