پا کستان میں 10 لاکھ افراد سے زائد افراد ہیر وئن کی لعنت، 30 فیصد ایڈز کا شکار، رپورٹ

0

دینہ: پا کستان میں 10لاکھ افراد سے زائد افراد ہیر وئن کی لعنت کا شکا ر ، 30فیصد ایڈز کا شکار ، جبکہ نسوار استعمال کر نے والے 80فیصد افراد کو مسوڑھوں کے کینسر کے خطرات لاحق ہو تے ہیں۔

تفصیل سرکاری و غیر سرکار ی رپورٹ کے مطابق پاکستان میں منشیات استعمال کر نے والوں میں خطر نا ک حد تک اضافہ ہو رہا ہے جبکہ پا کستان میں 10لاکھ سے زائد افراد ہیروئن کی لعنت کا شکارہیں ،ٹیکے کے ذریعے منشیات لینے والے 30فیصد افراد ایڈز جبکہ 90فیصد سے زا ئد ہیپا ٹا ئٹس کا شکار ہیں ،جبکہ پاکستان میں منشیات کا استعمال فیشن کے طور پر کیا جارہا ہے ،جبکہ مغربی یو نیورسٹیوں سے الحاق شدہ تعلیمی اداروں کے طلباء میں کو کین کے استعمال کا رحجا ن بھی بڑھ ر ہا ہے ۔

ادھر ایک اور رپورٹ کے مطابق نسوار استعمال کر نے والے 80فیصد افراد کو مسوڑھوں کے کینسر کے خطرناک لاحق ہو تے ہیں، چند لمحوں کے سکون کی خاطر تمباکو استعمال کر نے والے شاید نہیں جانتے کہ وہ اپنے ہا تھوں سے زندگی کی ڈور کو سمیٹ رہے ہیں ،طبی ماہرین کے مطابق نسوار کی شکل میں تمباکو کا استعمال سگریٹ نو شی سے کئی گنا زیادہ خطرناک ہے ،نسوار کا استعمال خیبر پختونخواہ کی روایت کا حصہ رہا ہے۔

محکمہ صحت کی رپورٹ کے مطابق نسوار استعمال کر نے والے 80فیصد افراد کو مسوڑھوں کے کینسر کے خطرناک لاحق ہو تے ہیں ،طبی ماہرین کے مطابق نسوار صحت کیلئے سگریٹ کے مقا بلے میں 5گنا زیا دہ خطر ناک ہے تاہم لو گوں کو آگاہی مہم کے ذریعے نسوار کے حقیقی خطرات سے با خبرکیا جائے تو کئی قیمتی زندگیوں کو بچا یا جاسکتا ہے ۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.