پاکستان میں کورونا وائرس کی صورتحال

مصدقہ کیسز
80,463
+4,065 (24h)
اموات
1,688
+67 (24h)
صحت یاب
28,923
35.95%
زیر علاج
49,852
61.96%
جہلم

ضلع بھر کے دکانداروں نے سرکاری نرخ ناموں کو ہوا میں اڑا دیا

جہلم: ضلعی انتظامیہ کی زیر نگرانی قیمت ایپ پر شکایات التوا کا شکار،ضلع بھر کے دکانداروں نے سرکاری نرخ ناموں کو ہوا میں اڑا دیا ،شہری مہنگے داموں اشیاء خوردونوش خریدنے پر مجبور، شاطر دکانداروں نے اشیاء خوردونوش کی الگ الگ 3 اقسام متعارف کروا دیں، اول ، دوم اور سوئم کے الگ الگ نرخ مقرر، شہریوں کا ڈپٹی کمشنر سے گرانفروشوں کے خلاف کارروائیاں کرنے کا مطالبہ کردیا۔

تفصیلات کے مطابق ضلعی حکومت کی نگرانی میں چلنے والی قیمت ایپ پر درج شکایات التوا کا شکار ہو گئیں ، سرکاری نرخ ناموں پر عملدرآمدکروانا کورونا وائرس کیوجہ سے معطل کردیا گیا ،شکایات کے باوجود سائلین دکانداروں کے ہاتھوں لٹنے پر مجبور ہیں۔

ضلعی حکومت نے شہریوں کو سرکاری قیمت پر اشیا خور ونوش کی فراہمی کے لئے قیمت ایپ متعارف کرا رکھی ہے اور قیمت ایپ پر درج سرکاری نرخ ناموں کے برعکس دکاندار کئی گنا اضافی رقم وصول کرکے شہریوں کو لوٹ رہے ہیں جبکہ قیمت ایپ پر درج شکایات پر متعلقہ حکام کی جانب سے شکایت پرکوئی کارروائی نہیں کی جارہی ، جس کیوجہ سے بااثر دکانداروں نے جنگل کاقانون نافذ کر رکھا ہے۔

دکانداروں نے من مرضی کے نرخ وصول کرنے شروع کررکھے ہیں ، جبکہ قانون نافذ کرنے والے اداروں کے افسران شکایات کرنے کے باوجود کارروائیاں کرنے سے گریزاں ہیں۔

شہریوں نے ڈپٹی کمشنر سے مطالبہ کیا ہے کہ مجسٹریٹس کو روزانہ کی بنیاد پر اشیاء خوردونوش فروخت کرنے والے دکانداروں کو روزانہ کی بنیاد پر چیک کرنے کا پابند بنایا جائے تاکہ لاک ڈاؤن کے دوران قائم ہونے والی خود ساختہ مہنگائی کا خاتمہ ممکن ہو سکے ۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close