سوہاوہاہم خبریں

تین سالوں میں پورے حلقے میں بلا تفریق ریکارڈ ترقیاتی کام کروائے ہیں۔ راجہ یاور کمال

سوہاوہ: ایم پی اے راجہ یاور کمال کی راجہ شاہد عزیز کیانی کے ہمراہ سوہاوہ پریس کلب آمد، ایم پی اے راجہ یاور کمال نے میٹ دی پریس میں اپنی تین سالہ کارکردگی اور آئندہ کے لائحہ عمل پر تفصیلی بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ اللہ پاک کے کرم سے گزشتہ تین سالوں میں ہم نے پورے حلقے میں بلا تفریق ریکارڈ ترقیاتی کام کروائے جن کی ماضی میں کوئی مثال نہیں ملتی۔

انہوں نے کہا کہ اس سے قبل دینہ اور سوہاوہ کے الگ الگ ممبر صوبائی اسمبلی ہوا کرتے تھے لیکن میں دعویٰ کے ساتھ کہہ سکتا ہوں ماضی کے دونوں ایم پی ایز کی کارکردگی کو ملا کر بھی ہر شعبے کی ہماری صرف 3 سالہ کارکردگی سے موازنہ کر لیا جائے تو فرق صاف نظر آئے گا۔

ممبر پنجاب اسمبلی نے کہا کہ مجھے اللہ کریم کی عطا اور حلقے کے عوام کے ووٹوں سے جو موقع ملا ہے اسے خود نمائی اور تشہیر جیسے فضول کاموں میں ضائع نہیں کرنا چاہتا جب اسمبلی کے فلور پر بات کی تو علاقہ ہی موضوع بحث رہا اور جب جب وزیراعلی پنجاب عثمان بزدار سے ملا اپنے حلقے کی محرومیوں کا ہی رونا روتا رہا یہی وجہ ہے کہ پنجاب بھر میں سب سے زیادہ ڈیڑھ ارب روپے کا ترقیاتی فنڈ اپنے حلقے کے لئے منظور کروایا۔

راجہ یاور کمال نے مزید کہا پورے حلقے میں کوئی ایک یونین کونسل ایسی نہیں جہاں ہم نے ترقیاتی کام نہ کروائے ہوں اور بہت جلد مزید منصوبوں پر کام شروع ہو جائے گا۔ سوہاوہ کا سب سے بڑا مسئلہ پانی کا ہے اور اسے مستقل بنیادوں پر حل کرنے کے لئے میں بکڑالہ ڈیم جیسے میگا پروجیکٹ کی تعمیر کے لئے دن رات کوشاں ہوں جس کے لئے وزیراعلی پنجاب سے متعدد بار میری بات بھی ہوئی ہے اور سروے بھی کروا چکا، امید ہے کہ اپنے دور حکومت میں اس پر کام کا آغاز کروا دوں گا۔

بعد ازاں صحافیوں کی جانب سے غیر فعال ریسکیو 1122، تحصیل انتظامیہ کی ناقص کارکردگی، سوہاوہ میں امن و امان کی بگڑتی ہوئی صورتحال اور ایم پی اے اور عوام کے درمیان رابطہ کی کمی کے حوالے سے پوچھے گئے سوالات کے جوابات میں راجہ یاور کمال نے کہا کہ سوہاوہ میں غیر فعال ریسکیو 1122 کے حوالے سے وزیراعلی پنجاب کے ساتھ میری بات ہوئی ہے قوی امکان ہے کہ اگلے سال جون تک اسے فعال کر دیا جائے گا۔

انہوں نے کہا کہ انتظامیہ کی ناقص کارکردگی کے حوالے سے بھی بہت جلد اہم پیش رفت دیکھنے کو ملے گی اور امن و امان کے حوالے سے سوہاوہ سے لاتعداد شکایات موصول ہو چکی جن کے فوری ازالے کے لئے جلد ڈی پی او جہلم سے ملاقات کروں گا تاکہ کوئی بہتر اور دیرپا حل نکالا جا سکے۔

رہی بات میرے اور عوام میں رابطے کے فقدان کی تو اس حوالے سے راجہ یاور کمال کا کہنا تھا کہ چونکہ میرا حلقہ رقبے کے لحاظ سے بہت بڑا ہے اس لئے ہر جگہ پہنچنا آسان نہیں شہریوں کی مشکلات کو مدنظر رکھتے ہوئے بکڑالہ میں راجہ شاہد عزیز کے ڈیرہ پر میں تقریباً روزانہ شام کے وقت موجود ہوتا ہوں تاکہ سوہاوہ کے رہائشی باآسانی اپنے مسائل کے حل کے لئے مجھ تک پہنچ سکیں۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button