جہلم

آئیسکو واپڈا کا انوکھا کارنامہ، بلوں سے افسران اور شکایات دفاتر کے نمبر ختم کر دیئے گئے

جہلم: آئیسکو واپڈا کا انوکھا کارنامہ ، بلوں سے افسران اور شکایات دفاتر کے نمبر ختم کر دیئے گئے، بجلی کے بلوں میں کوائف پُر کرنا صارفین کے لئے عذاب بن گیا، غریب ان پڑھ سادہ لوح صارف بجلی کے بلوں میں کوائف پُر کروانے کے لئے دربدر کی ٹھوکریں کھانے لگے، صارفین کا وزیر اعظم پاکستان ، وفاقی وزیر پانی و بجلی سے ریکارڈ کمپیوٹرائزڈ کروانے کا مطالبہ۔

تفصیلات کے مطابق آئیسکو سرکل جہلم کے صارفین کو پچھلے 3/4 ماہ سے موصول ہونے والے بجلی کے بلوں میں صارف کے مکمل کوائف مانگے جا رہے ہیں جو کہ ان پڑھ سادہ لوح افراد کے لئے پُر کرنا کسی مصیبت سے کم نہیں ، اس حوالے سے شہریوں کا کہنا ہے کہ شروع میں اس سہولت کو شہری احسن اقدام سمجھ کر پُر کرتے رہے تاکہ بجلی کے فرضی میٹروں کی نشاندہی ہو سکے۔

اس کے برعکس واپڈا دفاتر کا عملہ صارفین سے کوائف تو لے رہے ہیں لیکن اس کو دفتری استعمال میں نہیں لا رہے اور نہ ہی صارفین کا ریکارڈ مرتب کیا جا رہا ہے جس کے باعث ہر ماہ صارفین سے بجلی کے بلوں میں کوائف درج کرنے کے احکامات جاری کئے جارہے ہیں جس کو پُر کر نا ان پڑھ سادہ لوح صارف کے لئے انتہائی مشکل ہے۔

دوسری جانب محکمہ پوسٹ آفس کا عملہ بغیر کوائف کے بجلی کے بل صارفین سے وصول کرنے کی بجائے واپس کر دیتے ہیں جس کیوجہ سے صارفین کو بروقت بل جمع نہ ہونے کی صورت میں جرمانے کے ساتھ بل جمع کروانے پڑتے ہیں۔

یہاں یہ بات بھی قابل ذکر ہے کہ آئیسکو سرکل جہلم میں تقسیم ہونے والے بلوں پر درج محکمہ واپڈا کے افسران کے فون نمبرز اور شکایت دفتر کا نمبر درج کرنا بھی ختم کر دیا ہے جس کیوجہ سے صارفین کو شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑ رہاہے ، صارفین نے وزیراعظم پاکستان ، وفاقی وزیر پانی و بجلی سے مطالبہ کیاہے کہ بجلی کے بلوں پر متعلقہ سب ڈویژن کے ایس ڈی او ، ایکسیئن اور ایس ای کا نمبر درج کیا جائے تاکہ پریشانی کی صورت میں صارف متعلقہ افسران کے ساتھ رابطہ کر سکے۔

صارفین کا کہنا ہے کہ افسران کے پاس سرکاری موبائل فون نمبرز صارفین کی مشکلات کو کم کرنے کی غرض سے جاری کئے گئے ہیں اگر صارفین نے متعلقہ افسران سے رابطہ نہیں کرنا تو ماہانہ لاکھوں کروڑوں روپے کے اخراجات صارفین کی سمجھ سے بالا تر ہیں ۔

شہر کی سماجی رفاعی ، فلاحی ، شہری تنظیموں کے عمائدین نے وزیراعظم پاکستان، وفاقی وزیر پانی و بجلی سے مطالبہ کیا ہے کہ صارفین کے کوائف جلد از جلد مکمل کروائے جائیں اور ہر ماہ بجلی کے بلوں میں صارفین کے کوائف مانگنے والے خانے کو ختم کروایا جائے تاکہ صارفین بغیر جرمانے کے بروقت بجلی کے بل جمع کروا سکیں۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button