جہلم

الرجی کی مقدارموسم بہارکے شروع ہونے کے ساتھ ہی بڑھنے لگی ہے، شہری احتیاط کریں۔ ڈاکٹر حفیظ الرحمٰن

جہلم: شہر کی فضاؤں میں پھولوں ‘ گردوغبار’ پتوں اور گھاس سے پیدا ہونے والی الرجی کی مقدارموسم بہارکے شروع ہونے کے ساتھ ہی بڑھنے لگی۔

ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹر ہسپتال کے معروف چیسٹ فزیشن ڈاکٹر حفیظ الرحمن نے الرجی کے مریضوں کواحتیاطی تدابیر اختیار کرنے کی ہدایت کرتے ہوئے کہا کہ بہار کی آمد کے ساتھ ہی الرجی کے مریضوں کو سانس لینے میں دشواری کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔

تفصیلات کے مطابق جہلم شہر جو سرسبز وشادابی کی وجہ سے چاروں تحصیلوں میں منفرد حیثیت رکھتا ہے اورپولن الرجی کا سبب بننے والے خودروجنگلی شہتوت، گھاس اور سبزہ پھوٹنے کے ساتھ باغیچوں، کیاریوں میں پھولدار پودوں کی کونپلیں نکلنے کے ساتھ ہی فضاء میں پولن گرین پھیلنے کی مقدار میں تیزی سے اضافہ ہورہا ہے۔

سول ہسپتال جہلم کے معروف چیسٹ فزیشن ڈاکٹر حفیظ الرحمن نے الرجی سے متاثرہ مریضوں کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ وہ گھر سے نکلتے وقت موٹر سائیکل و سائیکل سوار سمیت سانس کی بیماری میں مبتلا افراد کو ماسک پہن کر نکلنا ہو گا۔ طلوع آفتا ب اور غروب آفتاب کے اوقات میں غیرضروری باہر نکلنے سے اجتناب کریں اور کھانا پکانے کے اوقات ایگزاسٹ فین کا استعمال اور احتیاطی تدابیر اختیار کریں تاکہ بیماری سے محفوظ رہ سکیں ۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button