عید کی آمد؛ کپڑوں، جوتوں اور مصنوعی جیولری کی قیمتیں قوت خرید سے باہر

0

جہلم: عید کی آمد ، کپڑوں ، جوتوں اور مصنوعی جیولری کی قیمتیں قوت خرید سے باہر، ریڈی میڈ گارمنٹس کے نرخ آسمانوں سے باتیں کرنے لگے، غریب اور متوسط طبقہ کے افراد قیمتیں سن کر ہی گھروں کوخالی ہاتھ لوٹنے پر مجبور ہیں۔

تفصیلات کے مطابق عید الاضحی کے حوالے سے شہریوں کی جانب سے خرید و فروخت کا سلسلہ زوروں سے شروع ہو گیا، جبکہ عید پر کپڑوں اور جوتوں ، مصنوعی جیولری کی قیمتیں خریداروں کے وہم و گمان سے بھی زائد ہیں ہو شربا مہنگائی نے غریب اور متوسط طبقے کے اوسان خطا کر دیئے۔

دکانداروں نے ڈالر کی اْڑان اور بڑھتے ہوئے ٹیکسوں کو مہنگائی کا جواز بنا کر کپڑوں ، جوتوں ، آرٹیفیشل جیولری اور دیگر ضروریات زندگی کی قیمتوں میں گزشتہ سال کی نسبت50 فیصد تک اضافہ کر دیا ہے ، جسکی وجہ سے غریب اور متوسط طبقہ کے افراد بازار خریداری کے لئے تو جاتے ہیں مگر قیمتوں کی باز پرس سے متاثرہو کر خالی ہاتھوں گھر لوٹنے پر مجبور ہیں۔

دکاندار عید کے موقع پر منافع خوری کے چکر میں مگن ہیں ، ریڈی میڈ گارمنٹس کی قیمتیں اپنے محور سے نکل کر خریداروں کو منہ چرھا رہی ہیں ، جبکہ ٹیلر ماسٹر بجلی کی آنکھ مچولی کا ٹیکنیکل جواز بنا کر گاہکوں سے سلائی کے منہ مانگے دام وصول کر رہے ہیں۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.