وزیراعظم عمران خان کا جلالپور نہر کیلئے لی جانے والی زمین کے مالکان کو ادائیگیوں کو یقینی بنانے کا حکم

0

وزیراعظم عمران خان نے زمین داروں سے تصادم کی وجہ سے 115 اعشاریہ 7 کلومیٹر طویل جلالپورنہر کا سنگ بنیاد رکھنے کی تقریب 26 دسمبر تک ملتوی کردی ہے۔ وزیراعظم نے تمام متعلقہ محکموں کو ہدایت کی کہ نہر کے لئے اراضی کے حصول کو متاثر کرنے والے تمام امور کو حل کریں۔

ذرائع کے مطابق وزیر اعظم عمران خان نے متعلقہ محکموں کو نہر کے لئے مطلوبہ اراضی کے حصول کا حکم دیا ہے جس سے تحصیل پنڈدادنخان کے علاقوں کے ساتھ ساتھ خوشاب کے علاقوں کو سیراب کرنے میں مدد ملے گی۔

وزیراعظم عمران خان نے زمینداروں کو ادائیگی کرنے کا بھی حکم دیا ہے جن سے مجوزہ نہر کے لئے اراضی حاصل ہوچکی ہے۔

اس سے پہلے توقع کی جارہی تھی کہ وزیر اعظم عمران خان 13 دسمبر کو جلالپور نہر کا سنگ بنیاد رکھیں گے۔ محکمہ آبپاشی محکمہ اور حکومت پنجاب کے دیگر متعلقہ محکموں نے بھی ایک عظیم الشان تقریب کا منصوبہ بنایا تھا۔

وزیر اعظم اس وقت تک سنگ بنیاد رکھنے سے انکار کر چکے ہیں جب تک کہ ”اراضی کے حصول کے معاملات کا ایک دوستانہ حل” حاصل نہیں ہوجاتا۔

جلالپور ایریگیشن پروجیکٹ (جے آئی پی) کے لئے کل 8,342 ایکڑ اراضی حاصل کی جانی تھی۔ اس میں جہلم میں 6,965 ایکڑ اور خوشاب میں 1,377ایکڑ اراضی شامل ہے۔

اس زمین کے لئے درکار لاگت کا تخمینہ 2 ارب 98 کروڑ روپے تھا۔ جون 2019 تک پی سی 1 میں تقریبا 2 ارب 60 کروڑ روپے جاری ہوئے اور استعمال ہوئے۔

یاد رہے کہ تقریباً 228 ایکڑ اراضی جہلم میں حاصل کی جانی تھی، پنڈ دادنخان میں تقریبا 6,737 ایکڑ اراضی جبکہ نہر کے لئے خوشاب میں تقریبا 1,767 ایکڑ اراضی حاصل کی جانی تھی۔

بشکریہ سیاست پی کے

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.