جہلم

خانوادہ علامہ ظہیر کے خلاف سازشوں کو فوری روکا جائے۔ حافظ عبدالحمید عامر

جہلم: صحابہ کرام اور اہل بیت عظام کا احترام فرض عین ہے اور ان سے محبت کرنا مسلمانوں کے عقائد میں شامل ہے۔

ان خیالات کا اظہار جامعہ علوم اثریہ جہلم کے مہتمم حافظ عبدالحمید عامر نے ایک بیان میں کیا۔ اس موقع پر مدیر الجامعہ حافظ احمد حقیق، نائب مدیر الجامعہ حافظ عبدالغفور جہلمی، مولانا سعد محمد مدنی، مولانا عکاشہ مدنی، مولانا قطب شاہ اور دیگر علمائے دین اور خطبائے ملت موجود تھے۔

انہوں نے کہا کہ شہید ملت علامہ احسان الٰہی ظہیر کے صاحبزادگان علامہ ابتسام الٰہی ظہیر اور علامہ ہشام الٰہی ظہیر کے شب و روز تحریر و تقریر کے میدان میں ایک کھلی کتاب کی مانند ہیں۔ ملک پاکستان میں جب کبھی شر پسند عناصر نے اسلامی عقائد اور اقدار کے خلاف سازش کی تو علامہ ابتسام الٰہی ظہیر ہر پلیٹ فارم پر ایک مضبوط آواز بنے اور اس فتنے کا قلع قمع کر کے دَم لیا۔

حافظ عبدالحمید عامر نے مزید کہا کہ اب کچھ شر پسند عناصر کو ان کا جرآت مندانہ طرز عمل ہضم نہیں ہو رہا۔ جب ان کے خلاف کوئی مواد نہیں ملا تو اذان الٰہی عرف عبدالرحمن سلفی نامی لڑکے کو مہرہ بنا کر ان کے خلاف استعمال کرنے کی ناپاک سازش کی جبکہ اذان الٰہی کا خانوادہ علامہ شہید سے کسی قسم کا کوئی تعلق نہیں ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ ہم انشاء اللہ شر پسندوں کے اس خواب کو شرمندہ تعبیر نہیں ہونے دیں گے۔ حکومت اور سکیورٹی اداروں کو آگاہ کرنا چاہتے ہیں کہ مرکزی جمعیت اہل حدیث پاکستان ایک پرامن جماعت ہے، ہمارے علماء اور قائدین کی کردار کشی اور ان کے خلاف الزام تراشی کا سلسلہ فی الفور بند کیا جائے اور اذان الٰہی کے خلاف جس طرح فوری کارروائی عمل میں لائی گئی ہے، اس کے دوسرے ساتھی جس نے صحابہ کرام اور ام المومنین کی شان میں گستاخی کی ہے، اسے بھی فوری گرفتار کر کے قانونی کارروائی کی جائے اور انہیں نشان عبرت بنایا جائے،بصورت دیگر ملک بھر میں احتجاج کی کال دیں گے، انشاء اللہ اپنے قائدین اور علمائے کرام کے خلاف ہر قسم کی سازش کو ناکام بنائیں گے اور ہر میدان میں ان کا دفاع کریں۔ ہم خانوادہ علامہ احسان ظہیرکو یقین دہانی کرواتے ہیں کہ ہم ہر وقت ان کے ساتھ شانہ بشانہ کھڑے ہیں۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button