وزیراعلیٰ پنجاب کی ریلوے اسٹیشن جہلم آمد، ٹرین کے خصوصی سیلون کا پائیدان نہ کھلنے سے عثمان بزدار باہر نہ آ سکے

0

جہلم: ریلوے سٹیشن جہلم پر وزیراعلیٰ پنجا ب کی آمد، ٹرین میں عثمان بزدار کے خصوصی سیلون کا پائیدان نہ کھل سکا اور وہ باہر نہ آسکے ،ان کی آمد کے پیش نظر سیکیورٹی کے سخت انتظامات کیے گئے تھے،مسافروں کی تعداد مایوس کن تھی۔

ٹرین کے جس سیلون میں وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار سوار تھے اس کا پائیدان کھولنے کیلئے ریلوے ملازمین نے سر توڑ کوشش کی مگر ناکامی ہوئی جس سے محکمہ ریلوے کی کارکردگی کا پول بھی کھل گیا،ضلعی افسران نے وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار ،وزیر قانون راجہ بشارت اور وفاقی وزیر ریلوے شیخ رشید کا استقبال کیااور وزیراعلیٰ سے ان کے سیلون میں جا کر ملاقات کی۔

تفصیلات کے مطابق جمعہ کے روز دوپہر جب لاہور سے راولپنڈی جانے والی ٹرین جہلم رکی جس میں وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار بھی سوار تھے جو لاہور سے راولپنڈی کے لیے سفر کررہے تھے، ریلوے سٹیشن جہلم ٹرین رکنے پر ان کے سیلون کادروازہ تو کھل گیا مگر پائیدان کھولنے کی بھر پور کوشش کے باوجود ریلوے ملازمین کو ناکامی کا سامنا کرنا پڑا،اسی کوشش کے دوران وفاقی وزیر ریلوے شیخ رشید اور وزیر قانون راجہ بشارت دوسری بوگی سے نکل کر باہر آئے۔

وزیراعلیٰ پنجاب کے خصوصی سیلون کے دروازے پر پہنچ کر بوکھلاہٹ کا شکار وفاقی وزیر ریلوے شیخ رشید نے الیکٹرانک میڈیا کے نمائندوں کو فوٹیج بنانے سے روک دیا اور ان کو ریلوے کے ایک ملازم نے بڑی مشکل سے وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار کی بوگی میں کھینچ کر چڑھایا،ان کے ساتھ وزیرقانون راجہ بشارت بھی تھے۔

ضلع جہلم کے ڈی سی محمد سیف انور جپہ،ڈی پی او جہلم سید حماد عابد ،سی او ہیلتھ ڈاکٹر وسیم اور دیگر انتظامی افسران کو بھی سیلون کے اندر وزیراعلیٰ سے ملاقات کے لیے جانا پڑا،پائیدان نہ کھلنے کی وجہ سے وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار نہ تو ٹرین سے باہر آسکے اور نہ ہی میڈیا کے نمائندوں سے گفتگو کر سکے،ٹرین پانچ منٹ تک ریلوے سٹیشن پر کھڑی رہی اس کے بعد اپنی منزل راولپنڈی کی طرف رواں دواںہوگی۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.