سول ہسپتال پنڈدادنخان میں آنے والے غریب مریضوں کے لواحقین پر مقدمہ درج

0

پنڈدادنخان: سول ہسپتال پنڈدادنخان میں آنے والے غریب مریضوں کے لواحقین پر مقدمہ درج، موضع سہوترے کا رہائشی ڈیلوری کیلئے اپنی بیوی کو سول ہسپتال لایا، مریضہ کو 6 گھنٹے داخل رکھنے کے بعد کہا گیا کہ اسکو سرگودھا لے جائیں، لواحقین نے احتجاج کیا تو دھکے دے کر ہسپتال سے باہر نکل دیا گیا۔ ایم ایس تحصیل ہیڈ کوارٹر ہسپتال ڈاکٹر انعام جمالی کی مدعیت میں مقدمہ بھی درج کر دیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق پنڈدادنخان سول ہسپتال میں مریض کے ساتھ آنے والے غریب لواحقین پر ایم ایس تحصیل ہیڈ کوارٹر ہسپتال ڈاکٹر انعام جمالی کی مدعیت میں مقدمہ درج مقدمہ نمبر 327بجرم 186 506کے تحت درج کرلیا گیا۔

محمد رمضان اپنی بیوی کو سول ہسپتال میں ڈیلوری کیلئے لایا 6 گھنٹے سے زائد مریضہ کو داخل رکھنے کے بعد خراب طبیعت کا کہہ کر سرگودھا ریفر کردیا گیا جس پر محمد رمضان نے احتجاج کیا تو ہسپتال کے عملہ نے دھکے دے کر باہر نکل دیا اور سٹی چوکی پر مقدمہ درج کرادیا گیا۔

محمد رمضان نے اعلی حکام سے اپیل کرتے ہوئے کہا کہ ہمارے ساتھ ظلم ہو رہا ہے، سرکاری ہسپتال کے سامنے پرائیویٹ ہسپتال سے وہ ہی ڈلیوری کیس 30 ہزار روپے میں ہوا ہے غریب آدمی ہوں، دوسرا ظلم ہمارے ہی اوپر مقدمہ درج کرا دیا گیا ہے۔ واقعہ کی انکوائری کر کے ہمارے ساتھ انصاف کیا جائے۔

سماجی حلقوں نے حکومت سے غیر جانبدارانہ تحقیقات کا مطالبہ کیا ہے۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.