جامعہ کے سالانہ جلسہ کی تاریخی کامیابی پر اللہ تعالیٰ کا کروڑ ہا شکر ادا کرتے ہیں۔ قاری محمد ابوبکر صدیق

0

جہلم: تحریک خدامِ اہلسنت والجماعت پنجاب کے امیر مولاناقاری محمد ابوبکر صدیق نے جامعہ حنفیہ تعلیم الاسلام مدنی محلہ جہلم کے 63 ویں دوروزہ عظیم الشان سالانہ جلسہ کی اختتامی نشست سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ اس عظیم الشان جلسہ کے شاندار انعقاد اور کامیابی پر اللہ تعالیٰ کا کروڑہا شکر اداء کرتے ہیں اور جن احباب نے بھی ہمارے ساتھ جس جس انداز سے تعاون کیا انتظامات میں حصہ ڈالا مختلف شعبہ جات میں ڈیوٹیاں سر انجام دیں اور اس جلسہ کی کامیابی کیلئے شب وروز دعائیں مانگیں ہیں۔

انہوں نے کہا کہ اُن تمام مخلص احباب کا تہہ دل سے شکر گزار ہوں خاص طور پر جلسہ میں شرکت کیلئے کوٹلی آزاد کشمیر، راولپنڈی ، گجرات ، ڈومیلی و دیگر علاقوں سے قافلوں کی صورت میں جو احباب تشریف لائے ان تمام احباب کا اور قافلوں کے منتظمین کا بھی انتہائی شکر گزار ہوں جبکہ چکوال ،تلہ گنگ اور میانوالی سے قائدِ اہلسنت حضرت مولانا قاضی ظہور الحسین اظہر مرکزی امیر تحریک خدامِ اہلسنت والجماعت پاکستان کی قیادت میں آنے والے مرکزی قافلہ کا مقامی احباب نے مولانا قاری محمد عمر فاروق اور مولانا قاری عبید اللہ حیدری و دیگر علماء کے ہمراہ راٹھیاں کے مقام پر فقید المثال استقبال کیا اور قافلے کے ہمراہ شہر کے مرکزی بازاروں اور شاہراہوں سے ہوتے ہوئے جلسہ گاہ پہنچے ا ور راستے میںمتعدد مقامات پر تاجروں نے قافلہ کے شرکاء پر گل پاشی کی۔

انہوں نے کہا کہ بلدیہ جہلم کی طرف سے بھی راستے کلیئر کروانے اور صفائی ستھرائی کے اعلیٰ انتظامات کئیے گئے اور خاص طور پر ضلعی انتظامیہ اور پولیس کی طرف سے سیکورٹی کے فول پروف انتظامات کیے گئے اور ٹریفک پولیس نے بھی قافلوں کی گزرگاہوں پر ٹریفک کا نظم کنٹرول کیا اور ذمہ دار پولیس افسران دورانِ جلسہ ہمہ وقت مستعد رہے جس پر میں ضلعی انتظامیہ پولیس بالخصوص ڈی پی او جہلم کا تہہ دل سے شکر گزار ہوں اور ایسے ہی جماعتی ورکروں اور جامعہ کے موجودہ و سابقہ طلباء اور فضلاء اور مقامی علماء کرام کا انتہائی ممون ہوں کہ انہوں نے جلسہ کو کامیاب بنانے کیلئے اپنا بھرپور کردار اداء کیا۔ اللہ رب العزت سب کو کروٹ کروٹ جزائے خیر عطاء فرمائے۔

آخر میں دعاء کا اعلان کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ ہمیں اپنے ملک وطنِ عزیز اسلامی جمہوریہ پاکستان کی سلامتی تحفظ اور بقاء کیلئے بھی دعاء کرنی ہے اور اپنے تمام فوت شدگان کو بھی دعاؤں میں یاد رکھنا ہے جبکہ مختلف احباب نے اپنی پریشانیوں اور مشکلات کے حل کیلئے دعاء کی درخواست کررکھی ہے ان کیلئے بھی خصوصی دعاء کرنی ہے کہ رب تعالیٰ سب کی التجائیں قبول فرمائیں ۔آمین

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.