کشمیر کے مسئلے پر عالمی برادری کو اب سنجیدہ رویہ اپنانا ہوگا، محمد شیراز کیانی

0

سوہاوہ: کشمیر کے مسئلے پر عالمی برادری کو اب سنجیدہ رویہ اپنانا ہوگا، نہتے کشمیریوں پر بھارتی مظالم میں جو روز افزوں اضافہ ہوتا چلا جارہا ہے اس کو روکنے کے لئے فوری طور پر عالمی طاقتیں اپنا کردار ادا کریں، بھارت کے حالیہ ظالمانہ اقدام سے خطے میں امن کے لئے شدید خطرات لاحق ہوگئے ہیں۔

ان خیالات کا اظہار برطانیہ میں مقیم سوہاوہ کی معروف سماجی شخصیت چیئرمین اختر ویلفیئر محمد شیراز کیانی نے جہلم اپڈیٹس سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے کہا کہ کشمیر کے مسئلے پر عالمی برادری کو اب سنجیدہ رویہ اپناناہوگا۔

انہوں نے کہا کہ نہتے کشمیری مسلمان عورتوں ، بچوں اور بزرگوں پر بھارتی مظالم میں جو روز افزوں اضافہ ہوتا چلا جارہا ہے اسکو روکنے کے لئے عالمی طاقتوں کو میدان عمل میں آنا ہوگا۔ بھارت کے حالیہ ظالمانہ اقدام سے خطے میں امن و امان کی صورتحال کو شدید خطرات لاحق ہوچکے ہیں ۔

محمد شیراز کیانی نے کہا کہ پاکستان کی آزادی کا جشن مناتے ہوئے ہمیں اپنے کشمیری بھائیوں پر ہونے والے مظالم کو بھی ضرور یاد رکھنا چاہئے، کشمیر کو بھارتی سامراج سے آزاد کرانے کے لئے اب محظ دعاؤں سے کام نہیں لیا جاسکتا اس کے لئے حکومتی سطح پر عملی اقدامات بروئے کار لانا ہونگے۔ جنگ کسی بھی علاقے کے لئے مسئلے کا حل نہیں ہوا کرتی لیکن اگر دشمن کھلی جارحیت پر اتر آئے تو اسے سبق سکھانا ضروری ہوتا ہے۔

انہوں نے مودی سرکار کو خبردار کرتے ہوئے کہا کہ گزشتہ دنوں کشمیر سے متعلق کئے گئے فیصلے پر نظر ثانی کرتے ہوئے فوری طور پر کالعدم قرار دیا جائے ورنہ خطے میں جو خونریزی ہوگی اور بھارت کا جو انجام ہوگا اسکی تمام تر ذمہ داری مودی سرکار پر عائد ہوگی۔ انہوں نے امید ظاہر کی کہ انشا ء اللہ اب وہ دن دور نہیں جب کشمیر کے مسلمان بھی آزادی جیسی نعمت سے سرفراز ہوسکیں گے۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.