پنڈدادنخاناہم خبریں

ڈنڈوت سیمنٹ فیکٹری انتظامیہ کی ہٹ دھرمی، فیکٹری کے 250 مزدور بے یارو مدد گار

پنڈدادنخان: ڈنڈوت سیمنٹ فیکٹری انتظامیہ کی ہٹ دھرمی، فیکٹری کے دو سو پچاس مزدور بے یارو مدد گار، بقایاجات کی ادائیگی میں دس سا ل کی تاخیر، سی بی اے خاموش تما شائی، پور ی زندگی مزدور کا زپر جہدوجہد مسلسل کی علامت، بابا مزدور راجہ کاظم کمال بھی واجبات سے محروم، سماجی تنظیموں کا مزدوروں کے بقایاجات ادا کرنے کا مطالبہ، ادائیگی میں مزید تاخیر برداشت نہیں کی جائے گی۔

تفصیلا ت کے مطابق ڈنڈوت سیمنٹ فیکٹری انتظامیہ کی ہٹ دھرمی او ر بے حسی کی وجہ سے سینکڑوں ریٹائرڈ مزدورں کو دس سال کے بعد بھی واجبات کی ادائیگی نہ ہو سکی۔ ڈنڈوت سیمنٹ فیکٹری سے ریٹائرہونے والے متعدد مزدور آج بھی اپنے واجبات کو لینے میں بے یارومددگار ہیں اور ان کا کو ئی پُرسان حال نہیں۔

ساری زندگی مزدوروں کے حق کے لیے جہدوجہد کرنے والے مزدور رہنما راجہ کاظم کمال بھی واجبات سے محروم ہیں اور بے بس دیکھائی دیتے ہیں درجنوں مزدور اپنے واجبات کی آس میں موت کی وادی میں جا چکے ہیں لیکن فیکٹری انتظامیہ اور یونین کے عہددران ٹس سے مس نہیں ہو ئے اور مسلسل بے حسی کا مظاہرہ کر رہے ہیں۔

اس اہم اور سنگین مسئلہ پر میٹنگ کی حد تک محدود ہیں کیونکہ فیکٹری یو نین کے پاس میٹنگ کے علاوہ اس مسئلہ کا کو ئی حل نہیں اور اس یونین کو مزدوروں نے اس لیے منتخب کیا تھا کہ یہ یونین واجبات دلوا دے گی جبکہ فیکٹری انتظامیہ مسلسل فیکٹری کے خسارے کا رونا روتی رہتی ہے جبکہ فیکٹری کی پروڈکشن مبینہ طور پر پندرہ سو ٹن یو میہ ہے ذرائع کے مطابق جس کو آدھے سے زیادہ بتا کر لاکھوں روپے ماہانہ ٹیکس بچایا جا رہا ہے جبکہ مزدوروں کے ٹوٹل واجبات بیس کروڑ روپے بنتے ہیں ۔

سماجی تنظیموں نے حکومت پنجاب اور متعلقہ اداروں سے مطالبہ کیا ہے کہ فیکٹری انتظامیہ اور یونین کی ہٹ دھرمی پر ایکشن لیا جائے اور فوری عملی اقدام کئے جائیں ۔

سماجی تنظیموں ،انجمن تاجران،سٹی ویلفیئر کونسل محبان،تحصیل سنوارو مومنٹ نے اس اہم مسئلے پر فوری اجلاس طلب کر کے اس اہم مسئلہ کو حکومتی سطح پر اُٹھانے کا فیصلہ کرتے ہوئے ڈنڈوت سیمنٹ فیکٹری انتظامیہ سے مطالبہ کرتے ہو ئے کہا کہ مزدورں کے واجبات کی ادائیگی کو جلد یقینی بنایا جائے بقایاجات ادا کرنے میں مزید تاخیر برداشت نہیں کی جائے گی اگر اس میں مزید تاخیر کی گئی تو تاریخی احتجاج کیا جائے گا۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button