پنڈدادنخاناہم خبریں

دنیا میں سالانہ ایک کروڑ لوگ تمباکو نوشی کے باعث مر رہے ہیں۔ ڈاکٹر راجہ مہدی حسن

پنڈدادنخان: 31مئی تمباکو نوشی سے بچاؤ کا عالمی دن ہے ،تمباکو نوشی کرنے والاصحتمند انسان کے مقابلے میں دس سال کم جیتا ہے ،دنیا میں سالانہ ایک کروڑ لوگ تمباکو نوشی کے باعث مر رہے ہیں جبکہ پاکستان میں تمباکو نوشی سے مرنے والوں کی تعداد تقریبا ایک لاکھ ہے،نوجوان نسل کو تمباکو نوشی سے بچانے کے لیے آگاہی بہت اہم ہے۔

ان خیالات کا اظہار پاکستان کے معروف ماہر قلب سینئر کنسلٹنٹ کارڈیالوجسٹ بینظیربھٹو ہسپتال روالپنڈی راجہ مہدی حسن (گولڈمیڈلسٹ)نے 31مئی تمباکونوشی سے بچاؤ کے عالمی دن کے حوالہ سے کیا۔ انہوں نے کہا کہ تمباکو نوشی کے باعث نوجوان نسل امراض قلب انجائنہ ،ہارٹ اٹیک جیسی بیماریوں کا شکار ہو رہے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ گلے ،زبان ،پھیپھڑوں معدہ اور انتڑیوں کے کینسر کے مریضوں میں تیزی سے اضافہ ہورہا ہے، (Passive Smoking)کے ذریعے سگریٹ پینے والا شخص ساتھ بیٹھے دوسروں لوگوں کو اسی طرح نقصان پہنچا رہا ہوتا ہے جس طرح وہ خود کو نقصان پہنچا رہا ہوتا ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ حکومت پاکستان نے تمباکو نوشی اور شوگر پروڈیکٹ (کوکا کولا ،پیپسی،سیون اپ)پر سر چارج لگایا ہے جسے وفاقی کابینہ نے منظور بھی کیا جس کی مد میں حکومت کو 55ارب کا فائدہ ہوگا جسے کرونا وبا کے لیے یا امراض قلب کی روک تھام کے لیے استعمال کیا جاسکتا ہے۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close