سوہاوہ کا ایک اور پاک فوج کا جوان مادر وطن پر قربان

0

سوہاوہ: شمالی وزیرستان میں پاک افغان سرحد پر باڑ لگاتے ہوئے فوجی جوانوں پر دہشت گردوں نے حملہ کردیا جس کے نتیجے میںڈومیلی کے نواحی علاقہ کے رہائشی نوجوان سمیت پاک فوج کا لانس نائیک وطن عزیز پر قربان ہو گیا، حملہ میں پاک فوج کے دو مزید جوان شہید ہوگئے جبکہ پاک فوج کی جوابی کارروائی میں کئی دہشت گرد مارے گئے۔

پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر) کے مطابق شمالی وزیرستان کے سرحدی علاقے الوارہ میں 60 سے 70 دہشت گردوں نے پاک افغان بارڈر پر باڑ لگانے کے دوران پاک فوج کے جوانوں پر حملہ کردیا۔

آئی ایس پی آر نے بتایا کہ پاک فوج کے جوانوں نے دہشت گردوں کو پسپا کردیا اور جوابی کارروائی میں کئی دہشت گرد ہلاک ہوگئے۔

آئی ایس پی آر کے مطابق دہشت گردوں سے مقابلے کے دوران پاک فوج کے تین جوان شہید بھی ہوئے جن میں ڈومیلی کے نواحی علاقہ رسولپور کے رہائشی لانس نائیک محمد علی ولد صوبیدار لیاقت علی ، لانس نائیک نذیر اور سپاہی امداد اللہ شامل ہیں جب کہ فائرنگ کے تبادلے میں 7 فوجی جوان زخمی بھی ہوئے۔

آئی ایس پی آر کے مطابق دہشت گردوں کی جانب سے حملہ اس وقت کیا گیا جب اہلکار سرحد پر باڑ لگانے میں مصروف تھے۔

پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ کا کہنا ہے کہ افغان سیکیورٹی فورسز اورحکام پاکستان کے خلاف اپنی سرزمین کا استعمال روکیں، پاکستان فوج سرحد پر باڑ لگارہی ہے جہاں اس پر حملے ہورہے ہیں۔

آئی ایس پی آر کا کہنا ہے کہ پاکستان تمام رکاوٹوں کے باوجود سرحد پر باڑ لگانے کا عمل جاری رکھے گا، افغان سیکیورٹی فورسز اور حکام کو سرحد پر کنٹرول موثر بنانے کی ضرورت ہے، افغانستان کی زمین پاکستان کے خلاف استعمال نہیں ہونی چاہیے۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.