جہلم

امسال بھی عید الفطر پرجہلم میں کھلونا نما اسلحہ کی ریکارڈ فروخت، انتظامیہ خاموش رہی

جہلم: گزشتہ برس کی طرح امسال بھی عید الفطر پرجہلم شہر میں کھلونا پستولوں کی فروخت عروج پر رہی اور انتظامیہ کسی طور بھی ان کھلونا نما پستولوں کی فروخت نہ رکواسکی۔ رفاعی ، مذہبی، سماجی اور شہری حلقوں نے ڈی پی او جہلم سے نوٹس لینے کا مطالبہ ۔

تفصیلات کے مطابق امسال بھی عید الفطر کے موقع پر شہر میں کھلونا پستولوں کی بڑے پیمانے پر فروخت ہوئی اور شہر بھر میں کم عمر بچے اور بچیاں ہاتھوں میں کھلونا پستول تھامے نظر آئے ،چین سے در آمدہ ان کھلونا پستولوں کی فروخت پڑے پیمانے پر دیکھی گئی جبکہ ان کھلونا پستولوں میں استعمال ہونے والے پلاسٹک کے چھروں سے متعدد بچے معمولی زخمی بھی ہوئے۔

شہر بھر میں فروخت ہونے والی ان کھلونا پستولوں میں گن،رائفل ،رپیٹر اور دوسرے ناموں سے منسوب بندوقوں کی فروخت بھی عروج پر رہی جبکہ سماجی اور شہری حلقے متعدد بار اعلیٰ حکام سے شہر میں ان کھلونا پستولوں کی فروخت روکنے کے حوالے سے بھی مطالبہ کرچکے ہیں۔

سماجی اور شہری حلقوں کا کہنا ہے کہ ان کھلونا پستولوں سے بچوں میں نہ صرف منفی خیالات اور رجحانات جنم لیتے ہیں بلکہ ان کھلونا پستولوں میں استعمال ہونے والے پلاسٹک کے چھروں سے بچوں کے زخمی ہونے کے بھی خدشات رہتے ہیں، شہر بھر میں فروخت ہونے والی ان کھلونا پستولوں کی قیمتیں سائز اورڈیزائن کے اعتبار سے مختلف ہوتی ہیں جو کہ 150روپے سے لے کر 400 روپے تک مقرر کر رکھی ہیں۔

شہریوں نے ڈی پی او جہلم سے مطالبہ کیا ہے کہ ان کھلونا پستولوں کی فروخت پر پابندی عائد کی جائے تا کہ بچوں کو ان منفی سرگرمیوں سے دور رکھا جاسکے۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button