جہلم

پنجاب کے سیکنڈری سکول ایجوکیٹرزاور اسسٹنٹ ایجوکیشن آفیسرز کا 15 مارچ کو احتجاجی مظاہرے کا اعلان

جہلم: پنجاب بھرکے سیکنڈری سکول ایجوکیٹرزاور اسسٹنٹ ایجوکیشن آفیسرزکا 15مارچ بروز سومواروزیراعلیٰ پنجاب ہاؤس کے سامنے بھرپور احتجاجی مظاہرے کا اعلان۔

تفصیلات کے مطابق پنجاب بھر کے تمام اضلاع کے ضلعی فوکل پرسنز نے لاہور میں ایک انتہائی اہم اور ہنگامی اجلاس میں فیصلہ کیا کہ پنجاب حکومت نے ہمارا 19دسمبرکوبنی گالہ اسلام آباد دھرنا اس وعدے پر ختم کرایا تھا کہ کنٹریکٹ پر کام کرنے والے تمام سیکنڈری سکول ایجوکیٹرز اور اسسٹنٹ ایجوکیشن آفیسرز کو جلد مستقل کردیا جائے گا لیکن 3ماہ گزر جانے کے باوجود ابھی تک ہمیں مستقل نہیں کیا گیا۔

31مارچ کوہمارے کنٹریکٹ میں ملنے والی دوسری توسیع بھی ختم ہوجائے گی۔اس لیے پنجاب بھرکے سیکنڈری سکول ایجوکیٹرز اوراسسٹنٹ ایجوکیشن آفیسرز15مارچ بروز سوموارکووزیراعلیٰ پنجاب ہاؤس لاہورکے سامنے احتجاجی مظاہرہ کریں گے۔

جہلم سے ضلعی فوکل پرسن ایس ایس ای اساتذہ اور ضلعی صدرپنجاب ایجوکیٹرزایسوسی ایشن جہلم محمد احسان الٰہی شاکر نے لاہورکے اس اہم اورہنگامی اجلاس میں خطاب کرتے ہوئے یقین دہانی کرائی کہ جہلم سے مردوخواتین ایس ایس ای اساتذہ اور اے ای اوز کا ایک بڑاقافلہ شرکت کرے گا۔

انہوں نے مزید کہا کہ حکومت پنجاب نے ہماری مستقلی کے سلسلے میں ہمیں بہت زیادہ مایوس کیا ہے۔ہم اس سے قبل بھی لاہور اور اسلام آباد میں احتجاجی مظاہرے کرچکے ہیںلیکن حکومت پنجاب ہمارے اس مسئلے پرسنجیدگی سے فیصلہ نہیں کررہی۔ وزیراعلیٰ پنجاب کے پاس 14مارچ تک کا وقت ہے کہ ہمیں مستقل کردیا جائے ورنہ 15مارچ کوبھرپور احتجاج کیا جائے گا۔

انہوں نے کہا کہ خدانخواستہ اگر یہ احتجاج بھی کارگرثابت نہ ہوا توجلد ہم دیگراساتذہ تنظیموں کے ہمراہ ایک بار پھربنی گالہ اسلام آباد میں احتجاجی دھرنا کے لیے جائیں گے اوراب یہ دھرنا مستقلی کے احکامات جاری ہونے تک جاری رہے گا کیونکہ پچھلی بار حکومتی وعدہ پورا نہیں ہوسکا تھا۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button