پنڈدادنخاناہم خبریں

چک نظام ریلوے پل پر لوہے کی پلیٹیں لگانے کا کام بند، راستہ نہ کھلنے سے عوام کو پریشانی کا سامنا

پنڈدادنخان: دریائے جہلم پر چک نظام ریلوے پل پر پیدل اور موٹر سائیکل سواروں کے گزرنے کے لئے راستے پر لوہے کی پلیٹیں لگانے کا کام بند ، سابق حکمرانوں نے انتخابات سے قبل پیدل چلنے والوں کے لئے راستہ کھولنے کا اعلان کیا تھا مگر 2 ماہ گزرنے کے باوجود راستہ نہ کھل سکا، تینوں اضلاع کے مکینوں نے وزیر اعظم پاکستان عمران خان اور وفاقی وزیر ریلوے شیخ رشید احمد سے وکٹوریہ پل پر راستہ بحال کروانے کا مطالبہ۔

تفصیلات کے مطابق دریائے جہلم کے سنگم پر چک نظام ریلوے پل پر ریلوے ٹریک کے دونوں اطراف میں پل پر پیدل اور موٹر سائیکل سواروں کے گزرنے کے لئے لوہے کی پلیٹیں نصب کی جارہی تھیں یہ پل 2 سال قبل لکڑی کے پشتے ٹوٹنے کے بعد عارضی طور پر بند کیا گیا تھا۔

علاقہ مکینوں نے شدید احتجاج کیا تو سابق ممبران قومی اسمبلی کے مطالبے پر سابق وفاقی وزیر خواجہ سعد رفیق نے پل کے دونوں جانب لوہے کی پلیٹیں نصب کرکے 6 ماہ کے اندر اندر پیدل چلنے والے افراد کے لئے راستہ کھولنے کے احکامات جاری کئے اس طرح ٹھیکیدار نے بڑی تیزی کے ساتھ کام کا آغاز کیا 25 جولائی کو ہونے والے عام انتخابات سے قبل ٹھیکیدار نے کام میں دلچسپی لینی چھوڑ دی جس کیوجہ سے پیدل چلنے والے افراد کو شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑرہاہے ۔

وکٹوریہ پل سے ضلع جہلم ، ضلع سرگودھا ، ضلع منڈی بہاؤالدین کے شہری دریا عبور کرکے اپنے اپنے علاقوں میں داخل ہوتے ہیں ، تینوں اضلاع کے شہریوں نے وزیر اعظم پاکستان عمران خان، وفاقی وزیر ریلوے شیخ رشید احمد سے وکٹویہ پل پر پیدل چلنے والوں کے لئے راستہ بحال کروانے کا مطالبہ کیاہے ۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button