جہلم

موبائل فونز پر اشیاء کی مارکیٹنگ کرنے والوں نے شہریوں کی زندگی اجیرن بنا دیں

جہلم: موبائل فونز پر اشیاء کی مارکیٹنگ کرنے والوں نے شہریوں کی زندگی اجیرن بنا دیں، نوعمر لڑکوں، لڑکیوں سمیت ہر عمر کے افراد کو موبائل فون کے زریعے جنسی ادویات کے اشتہارات بھیجنے کا سلسلہ زوروشور سے جاری۔
موبائل فون کے حقوق کے تحفظ کے ادارے پاکستان ٹیلی کمیونیکیشن اتھارٹی (پی ٹی اے) کے حکام خاموش تماشائی بنے ہوئے ہیں اس ضمن میں شہریوں نے بتایا کہ انہوں نے اپنے بچوں کو ہنگامی رابطے کے لئے موبائل سیٹ استعمال کرنے کے لئے دئیے ہوئے ہیں مگر ان پر جنسی ادویات سمیت دیگر غیر اخلاقی اشیاء کی فروخت کرنے والوں نے ایس ایم ایس کے ذریعے اشتہارات بھجوانے کی بھر مار کر رکھی ہے جن میں متعدد اشتہارات ایسے بھی ہوتے ہیں جن کی عبارت انتہائی فحاشی کے زمرے میں آتی ہے۔
شہریوں نے بتایا کہ انہیں ان اشتہارات کے ساتھ ساتھ بے نظیر انکم سپورٹ پروگرام اور دیگر نجی کمپنیوں کے انعامات جیتنے کے بھی ایس ایم ایس موصول ہوتے ہیں اور یہ عمل روزانہ کی بنیاد پرجاری ہے جس سے کئی سادہ لوح افراد جمع پونجی سے محروم ہو چکے ہیں۔
شہریوں نے وزیراعظم پاکستان عمران خان ، مشیر اطلاعات و نشریات ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان ، وفاقی وزیر داخلہ سے مطالبہ کیاہے کہ موبائل فونز کمپنیوں کو ایسے اشتہارات کے میسجز کرنے پر پابندی عائد کی جائے تاکہ نوجوان نسل بے راہ روی کا شکار ہونے سے محفوظ رہ سکے ۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button