جہلم

زیادہ کمائی کا لالچ، ٹرانسپورٹروں کی جانب سے مبینہ طور پر اوورلوڈنگ اور خود ساختہ کرایوں کی وصولی عروج پر

جہلم: زیادہ کمائی کا لالچ ، ٹرانسپورٹروں کی جانب سے مبینہ طور پر اوورلوڈنگ اور خود ساختہ کرایوں کی وصولی عروج پر، سیکرٹری ڈسٹرکٹ روڈ ٹرانسپورٹ اتھارٹی کی خاموشی سوالیہ نشان بن گئی ، مسافر سراپا احتجاج، وزیراعلیٰ پنجاب، چیف سیکرٹری پنجاب سے نوٹس لینے کا مطالبہ۔

تفصیلات کے مطابق جہلم جنرل بس اسٹینڈ سمیت چاروں تحصیلوں میں موجود اڈوں میں سرکاری کرایوں کے نہ تو کرائے نامے آویزاں ہیں اور نہ ہی آرٹی اے سیکرٹری کا نمبر درج ہے تاکہ شکایت کی صورت میں مسافر آرٹی اے سیکرٹری کو ٹرانسپورٹرز کی جانب سے لوٹ مار کے بارے آگاہ کر سکیں۔

پنجاب روڈ ٹرانسپورٹ اتھارٹی کے جاری کردہ کرایہ ناموں کے مطابق فی مسافر فی کلو میٹر 71پیسے کرایہ مقرر ہے ، جبکہ ٹرانسپورٹرز آرٹی اے سیکرٹری کی سرپرستی کی وجہ سے ہزار گنا اضافی کرایہ وصول کرکے مسافروں کی جیبوں پر ڈاکے ڈال رہے ہیں۔

قابل ذکر بات یہ ہے کہ ویگنوں اور ہائی ایسسز میں خواتین کے لئے کوئی نشست مخصوص نہیں ، خواتین اور مرد مسافروں کو ایک دوسرے کے ساتھ بٹھا دیا جاتا ہے ، جس کی وجہ سے لڑائی جھگڑے روزانہ کا معمول بن چکے ہیں، مسافروں نے اس اہم مسئلے پر توجہ مبذول کروانے کے لئے وزیراعلیٰ پنجاب، چیف سیکرٹری پنجاب سے نوٹس لینے کا مطالبہ کیاہے ۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button