جہلماہم خبریں

امتحانی پرچہ چوری و نرسنگ طالبات کو قید کرنے کا معاملہ، ڈائریکٹر جنرل نرسنگ پنجاب نے نوٹس لے لیا

جہلم: امتحانی پرچہ چوری کے الزام میں طالبات کو قید کرنے کا معاملہ پر جہلم اپڈیٹس کی خبر پر ایکشن، ڈائریکٹر جنرل نرسنگ پنجاب نے نوٹس لے لیا، دو رکنی ٹیم کیس کی انکوائری کرے گی، دو رکنی ٹیم میں ڈاکٹر امتیاز اور ڈاکٹر شمع 24 گھنٹے میں انکوائری کر کے رپورٹ کریں گے، سول ہسپتال کی تھرڈ ائیر کی نرسنگ طالبات پر امتحانی پرچہ چوری کے الزام میں سکول کی پرنسپل نے 10 گھنٹے تک کمرے میں قید رکھا جسکی خبر گزشتہ رات جہلم اپڈیٹس نے شائع کی تھی۔

یہ خبر بھی پڑھیں: سول ہسپتال جہلم کا نرسنگ ہاسٹل نجی جیل بنا دیا گیا، امتحانی پرچہ چوری کے الزام میں درجنوں طالبات قید

تفصیلات کے مطابق ڈائریکٹر جنرل نرسنگ پنجاب کوثر پروین نے نرسنگ سکول جہلم میں پرچہ آوٹ ہونے اور طالبات کو قید کرنے کے معاملے کا از خود نوٹس لیتے ہوئے انکوائری کمیٹی تشکیل دے دی ہے جو کہ 24 گھنٹے کے قلیل وقت میں اپنی رپورٹ پیش کرنے کی بابند ہوگی۔

یہ خبر بھی پڑھیں: سول ہسپتال نرسنگ سکول طالبات کیلئے جیل بن گیا، طالبات کو شدید ذہنی کا نشانہ بنا نا معمول بن گیا

ڈائریکٹر جنرل نرسنگ پنجاب کوثر پروین نے خصوصی ہدایات جاری کرتے ہوئے کہا ہے کہ اس واقعہ میں اصل حقائق کو سامنے لیا جائے گا اور قانون کے مطابق اس میں ملوث کالی بھیڑوں کو سزا دی جاے گی، ضلعی سطح پر سی ای او ہیلتھ ڈاکٹر وسیم اقبال اس معاملے کی تفتیش کریں گے ۔

میڈیا سے بات کرتے ہوئے ڈاکٹر وسیم اقبال نے بتایا ہے کہ ضلعی سطح پر 2 رکنی کمیٹی بھی تشکیل دی گئی ہے ، جس میں ڈسٹرکٹ کوارڈینیٹر آئی آر ایم این سی ایچ ڈاکٹر امتیاز ڈار اور ایس ڈبلیو ایم او ڈاکٹر شمع راجہ سے معاونت حاصل ہوگی۔ حقائق کو سامنے لانے کے لئے کارروائی جاری ہے اور جلد نتائج کے ساتھ رپورٹ پیش کریں گے ۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button