جہلماہم خبریں

سرکاری ہسپتالوں میں دوران ڈیوٹی موبائل فون کے استعمال پر پابندی عائد

جہلم: سرکاری ہسپتالوں میں دوران ڈیوٹی موبائل فون کا بڑھتا ہوا استعمال اور علاج معالجے کی فراہمی میں تعطل کے باعث محکمہ پرائمری اینڈ سیکنڈری ہیلتھ کیئر نے ہسپتالوں اور مراکز صحت میں دوران ڈیوٹی ڈاکٹرز اور عملے کے موبائل فون استعمال کرنے پرسختی سے پابندی عائد کردی ہے۔

محکمہ پرائمری اینڈ سیکنڈری ہیلتھ کیئر کی جانب سے جہلم سمیت صوبہ پنجاب کے تمام اضلاع کے سی اوی اوز، ڈسٹرکٹ ہیلتھ آفیسرز ،تحصیل ہسپتالوں کے ایم ایس ، دیہی اور بنیادی مراکز صحت اور ڈسپنسریز کے انچارج صاحبان کے نام مراسلہ ارسال کیاہے ۔

مراسلے میںیہ بات واضح کی گئی ہے کہ سی سی ٹی وی کیمروں کی سرویلنس کے زریعے موبائل فون کے استعمال کے متعدد واقعات رپورٹ ہورہے ہیں کہ ڈاکٹرز اور پیرا میڈیکل سٹاف ڈیوٹی کے دوران موبائل فون کے بے جا استعمال سے علاج معالجے کی فراہمی متاثر کر رہا ہے۔

محکمہ پرائمری اینڈ سیکنڈری ہیلتھ کیئر نے موبائل فون کو بلا جواز استعمال کرنے پر پابندی عائد کر دی ، ڈی ایچ کیو ، ٹی ایچ کیو، رورل ہیلتھ سنٹرزسمیت دیگر مراکز صحت پر اس پابندی کا سختی سے اطلاق ہوگا، ڈاکٹروں ، نرسوں ، پیرامیڈیکل و دیگر سٹاف بھی ان احکامات پر عمل درآمد کرنے کا پابند ہوگا۔ دوران ڈیوٹی انتہائی ضروری اور سرکاری امور کی انجام دہی کے لئے موبائل استعمال کی اجازت دی گئی ہے ۔

مراسلے میں ہسپتالوں اور مراکز صحت کے سربراہان کو آگاہ کیا گیاہے کہ دوران ڈیوٹی موبائل فون کے استعمال کی ہرگز اجازت نہیں ہے ، سی ای اوز ہیلتھ سمیت ایم ایس اور مراکز صحت کے انچارج صاحبان کو ہدایت کی گئی ہے کہ اس حکم پر سختی سے عملدرآمد کو یقینی بنایا جائے اور اگر کوئی سٹاف ممبر خلاف ورزی کا مرتکب پایا گیا تو اس کے خلاف سخت محکمانہ کارروائی عمل میں لائی جائے گی۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button