ڈی پی او جہلم نے 15 گھنٹوں کے اندر مغوی کو بازیاب اور اغوا کاروں کو گرفتار کرکے ایک نئی تاریخ رقم کر دی

0

پنڈدادنخان: تھانہ جلالپور شریف کے علاقہ پنن والا سے اغوا ہونے والا مغوی شہباز نامی تاجر اغوا کاروں کے چنگل سے آزاد ، ڈی پی او جہلم کیپٹن (ر) سید حماد عابد پولیس فورس کے جوانوں کی خود کمانڈ کرتے رہے ، ڈی پی او جہلم کا پنن وال پہنچنے پر شہریوں کی جانب سے پرتپاک استقبال ، سید حماد عابد پر پھولوں کی پتیاں نچھاور کی گئیں، علاقہ مکینوں نے ڈی پی اوجہلم کو پنن وال پہنچنے پر ڈھول کی تھاپ پر بھنگڑے ڈال کر استقبال کیا ، پنجاب پولیس زندہ باد ، ڈی پی او جہلم زندہ باد کے فلک شگاف نعروں کی آوازیں فضاء میں گونجتی رہیں۔

تفصیلات کے مطابق تھانہ جلالپور شریف کے علاقہ پنن وال کے رہائشی مشتاق حسین ولد غلام حسین نے 20 اگست کی رات ایس ایچ او تھانہ جلالپورشریف کو تحریری درخواست دیتے ہوئے آگاہ کیا کہ میرے حقیقی بیٹے شہباز حسین نے موبائل شاپ بنا رکھی ہے جو روزانہ رات 10 بجے کے قریب بند کرکے گھر آجاتا ہے ، آج وہ گھر نہیں آیا بلکہ اس کے موبائل فون نمبر03005648081 سے مجھے فون کال آئی نامعلوم افراد نے بتایا ہے کہ آپ کا بیٹا ہمارے پاس ہے 5 لاکھ روپے کا انتظام کرو رقم کی وصولی کے لئے بعد میں کال کریں گے۔ جس پر ایس ایچ او تھانہ جلالپور شریف جواد انور خان نے ڈی ایس پی پنڈدادنخان سلیم خٹک کو حقائق سے آگاہ کیا ۔

ڈی ایس پی پنڈدادنخان نے ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر کیپٹن (ر) سید حماد عابد کو تاجر کے اغواء بارے مطلع کیا اس طرح ڈی پی او جہلم سید حماد عابد کی سربراہی میں رات 2 بجے ایلیٹ فورس اور متعلقہ تھانوں کی پولیس نے علاقے کی ناکہ بندی کر لی ، اس طرح ڈی پی او جہلم پولیس کے جوانوں کی کمانڈ کرتے ہوئے جدید ٹیکنالوجی کا استعمال کرتے ہوئے خود دشوار گزار راستوں سے گزرتے ہوئے کنگر حسنوٹ کی پہاڑیوں میں داخل ہوئے پولیس فورس کو دیکھتے ہوئے اغواء کاروں نے پولیس فورس پر فائرنگ شروع کر دی۔

ڈی پی او جہلم سید حماد عابد نے انتہائی مہارت کا مظاہرہ کرتے ہوئے نہ صرف اغواء کاروں کو صحیح سلامت گرفتار کیا بلکہ مغوی نوجوان کو بھی بازیاب کرواکر اس کے والدین کے حوالے کیا۔

ڈی پی او جہلم سید حماد عابد جب تھانہ جلالپور شریف کے علاقہ پنن وال میں پہنچے تو شہریوں کے جم غفیرنے ڈی پی او جہلم کاوالہانہ استقبال کرتے ہوئے خراج تحسین پیش کیا اس موقع پر سینکڑوں کی تعداد میں علاقہ مکینوں نے پنجاب پولیس اور ڈی پی او جہلم زندہ باد کے نعرے بلند کئے۔

ڈی پی او جہلم نے شہریوں کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ میری فورس نے جس دلیری کا مظاہرہ کیا ہے اس پر میں اپنے ماتحت عملہ کو شاباش دیتا ہوں انہوں نے کہا کہ چوکی مصری موڑ کے انچارج چوہدری عمران نے دلیری اور ہمت کا مظاہرہ کرتے ہوئے اغواء کاروں کو گرفتار کیا جس پر اسسٹنٹ سب انسپکٹر چوہدری عمران ، سی آئی اے سٹاف کے انچارج عمران کیانی ،عنصر بٹ سمیت ٹیم میں شامل تمام پولیس کے جوانوں کے لئے تعریفی اسناد اور نقد انعام کا اعلان کیا گیا جبکہ سویلین شہری جنہوںنے پولیس کی معاونت کی وہ بھی خراج تحسین کے مستحق ہیں۔

ڈی پی او جہلم نے کہا کہ آر پی او راولپنڈی اگلے چند روز میں جہلم تشریف لارہے ہیں ، ان کی موجودگی میں پولیس کے غیور، نڈر ، دلیر ، بے باک افسران و اہلکاروں کو تعریفی اسناد ، نقد انعام اور پولیس کی معاونت کرنے والے شہریوں کو بھی تعریفی اسناد کے ساتھ نقد انعام سے نوازہ جائیگا۔

ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر کیپٹن (ر) سید حماد عابد نے 15 گھنٹوں کے اندر مغوی کو بازیاب اور اغواء کاروں کو گرفتار کرکے ایک نئی تاریخ رقم کی ہے ، اس موقع پر یونین کونسل دولت پور کے سابق چیئرمین راجہ محمودنے ریڈنگ پارٹی کی حوصلہ افزائی کے لئے 20 ہزار روپے کا اعلان کیا ۔

شہریوں نے ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر کیپٹن (ر) سید حماد عابد کی کاوشوں و کوششوں کو سراہتے ہوئے خراج تحسین پیش کیااور آئی جی پنجاب سے مطالبہ کیا کہ ڈی پی او جہلم کو بروقت کارروائی کرنے اور مغوی نوجوان کو بازیاب کروانے سمیت اغواء کاروں کو صیح سلامت گرفتارکرنے پر نقد انعام سے نوازہ جائے تاکہ مقابلے کی فضاء قائم ہو سکے ۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.