پنڈدادنخان سرکل کے تمام تھانوں میں چوریاں، ڈکیتیاں، راہزنی کی وارداتوں میں ہوشربا اضافہ، پولیس بے بس

0

پنڈدادنخان سرکل کے تمام تھانوں میں چوریاں، ڈکیتیاں، راہزنی کی وارداتوں میں ہوشربا اضافہ، پولیس بے بس ، خصوصاً ڈکیتی و راہزنی میں لٹنے والے متاثرین کی درخواستیں تھانے میں موجود فرنٹ ڈیسک کا عملہ متعلقہ ایس ایچ اوز / محرر صاحبان کی ملی بھگت سے وصول ہی نہیں کرتا تاکہ تھانوں کی کارکردگی کو سب اچھا ہے کی رپورٹ اعلیٰ حکام کو دی جا سکے ، آئی جی پنجاب سے نوٹس لینے کا مطالبہ ۔

تفصیلات کے مطابق جہلم کی تحصیل پنڈدادنخان کے تھانوں میں آئے رو ز چوریوں، ڈکیتیوں اور راہزنی خصوصاً دن دیہاڑے ہونے والی وارداتوں میں اضافہ ہوچکا ہے ، جبکہ پولیس متاثرین کو صرف طفل تسلیاں ہی دیتی ہے۔

متاثرین مرد یا خاتون اگر اپنی درخواست متعلقہ تھانہ میں قائم فرنٹ ڈیسک پر لے جائے توا س کی درخواست دیکھ کر فرنٹ ڈیسک پر موجود عملہ درخواست لینے کی بجائے متاثرین کو ایس ایچ اوز یا محرر کے پاس پیش ہونے کا کہہ کر اپنی جان چھڑالیتے ہیں۔ فرنٹ ڈیسک پر تعینات عملہ قانوناً متاثرین کی رپورٹ فوری درج کرنے کے پابند ہیں لیکن تھانوں میں اس طرح کے قانون پر عملدرآمد نہیں ہو رہا جس کیوجہ سے متاثرین حصول ِ انصاف کے لئے دربدر کی ٹھوکریں کھانے پر مجبور ہیں۔

متاثرین نے وزیر اعلیٰ پنجاب عثمان بزدار آئی جی پنجاب سے مطالبہ کیاہے کہ ضلع جہلم کے تھانوں میں قائم فرنٹ ڈیسک پر تعینات عملہ کو اس بات کا پابندبنایا جائے کہ غیر جانبدار ہو کر ہر قسم کی درخواست کو ٹیگ نمبر لگایا جائے تاکہ متاثرین کا اندراج مقدمہ ہو سکے۔

پنڈدادنخان سرکل میں بڑھتی ہوئی وارداتوں پر علاقہ مکینوں نے تشویش کا اظہار کرتے ہوئے وزیر اعلیٰ پنجاب عثمان بزدار ،آئی جی پنجاب ، آرپی او راولپنڈی ، ڈی پی او جہلم سے مطالبہ کیاہے کہ پنڈدادنخان سرکل کے تھانوں میں فرض شناس ، ایماندار ایس ایچ اوز اور محرر تعینات کئے جائیں تاکہ جرائم میں کمی واقع ہو سکے ۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.