جہلم

بجٹ میں سرکاری ملازمین کی تنخواہوں میں 10 فیصد اضافہ، سرکاری ملازمین نے مسترد کردیا

جہلم: قومی اسمبلی کی جانب سے سرکاری ملازمین کی تنخواہوں میں 10 فیصد اضافہ سرکاری ملازمین نے مسترد کردیا۔ مہنگائی کے تناسب سے تنخواہوں میں اضافہ کیا جائے موجودہ اضافہ اونٹ کے منہ میں زیرہ دینے کے مترادف ہے۔ ملازمین

تفصیلات کے مطابق قومی اسمبلی کی جانب سے پیش کیے گئے بجٹ میں سرکاری ملازمین کی تنخواہوں اور ریٹائرڈ ملازمین کی پنشنوں میں دس فیصداضافے پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ10 فیصد کی بجائے 25 فیصد بنیادی تنخواہ کے ساتھ اضافہ ضروری تھا۔

انہوں نے کہا کہ وفاقی حکومت نے نئے بجٹ میں خوشخبری کا کہہ کر ملازمین اور ریٹائرڈ پنشنرز کے ساتھ دھوکہ کیاہے ، اس حوالے سے سرکاری ملازمین کا کہنا ہے کہ مہنگائی کے تناسب سے تنخواہوں میں موجودہ اضافہ ہمیں منظور نہیں۔

انہوں نے حکومت وقت سے مطالبہ کیا ہے کہ پچھلے سالوں کے تمام ایڈہاک ریلیف کو بنیادی تنخواہ میں ضم کرکے بنیادی تنخواہ پر 25 فیصد اضافے کا نوٹیفیکیشن جاری کیا جائے تاکہ سرکاری ملازمین مہنگائی کے بوجھ کو برداشت کر سکیں۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button