گورنمنٹ گرلز ہائی سکول کے گارڈ کا کنٹریکٹ ناپسندیدگی کی بھینٹ چڑھ گیا، نوکری سے فارغ

0

جہلم: محکمہ تعلیم میں پسند نا پسند کا عمل پروان چڑھنے لگا،گورنمنٹ گرلز ہائی سکول کے گارڈ کا کنٹریکٹ سابق پرنسپل کے ہتک آمیز رویہ کے باعث ناپسندیدگی کی بھینٹ چڑھ گیا، کئی روز تک کام کروانے اور موجودہ سکول پرنسپل اور سٹاف سے بہترین کارکردگی کا سرٹیفکیٹ حاصل کرنے کے باوجود سی ای او ایجوکیشن،ڈائریکٹر ایجوکیشن اور ڈپٹی ڈسٹرکٹ آفیسر تعلیم (زنانہ)نے غریب محنت کش کو نوکری سے فارغ کر دیا،،غریب سکول گارڈ کا صوبائی وزیر تعلیم،وزیر اعلی،وفاقی وزیر اطلاعات اور وزیر اعظم سے نوٹس لیکر کنٹریکٹ بحال کرنے کا مطالبہ۔

کوٹ بصیرہ کے رہائشی امجد محمود نے بتایا کہ میں پاکستان نیوی سے ریٹائر ہوا تھا سانحہ اے پی ایس کے بعد تمام سرکاری سکولوں میں پاکستان فوج سے ریٹائرڈ ہونے والے افراد کو سکول گارڈ بھرتی کیا گیا میں گورنمنٹ گرلز ہائی سکول خورد میں سکول گارڈ بھرتی ہوا دو سال پانچ ماہ تک وہاں ڈیوٹی سر انجام دی اس دوران پرنسپل نے میرے ساتھ ہتک آمیز سلوک بھی کیا لیکن میں اپنے فرائض سر انجام دیتا رہا۔

امجد محمود نے بتایا کہ پرنسپل کے رویہ سے تنگ آکر میں نے گورنمنٹ گرلز پرائمری سکول نمبر3کے سکول گارڈ کی باہمی رضامندی سے تبادلہ کروا لیا،آٹھ ستمبر کو کنٹریکٹ ختم ہونا تھا میں نے اس سے قبل کنٹریکٹ رینول کی درخواست محکمہ تعلیم کے افسران کو دی تو محکمہ تعلیم کے افسران نے کہا تم کام کرو کنٹریکٹ رینیو ہو جائے گا لیکن کنٹریکٹ ختم ہونے کے بعد مجھے نوکری سے فارغ کرنے کا نوٹس مل گیا۔

امجد محمود نے بتایا کہ میں دوبارہ محکمہ تعلیم کے چیف ایگزیکٹو آفیسر،ڈپٹی ڈسٹرکٹ آفیسر ایجوکیشن زنانہ اور ڈائریکٹر کے پاس گیا تو انہوں نے کہا گورنمنٹ گرلز ہائی سکول خورد کی پرنسپل نے سرٹیفکیٹ میں تمہارے خلاف لکھا ہے میں نے کہا میں جس سکول میں فرائض سرانجام دے رہا ہوں وہاں کی پرنسپل اور تمام سٹاف نے مجھے بہترین کارکردگی کا سرٹیفکیٹ دیا ہے لیکن کسی افسر نے میری بات نہیں سنی اور درخواست لیکر رکھ لی ہے۔

امجد محمود نے کہا میرے دو بچے ہیں کمانے والا کوئی نہیں وزیر اعظم عمران خان نے بے روز گاروں کو روزگاردینے کا کہا اعلان کیا تھا لیکن یہاں محکمہ تعلیم کے افسران پسند ناپسند کی بناء پر لوگوں کو بے روز گار کر رہے ہیں غریب سکول گارڈ نے اعلی حکام سے نوٹس لینے کا مطالبہ کیا ہے۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.