جہلماہم خبریں

چوہدری فرخ الطاف کی گھر کی چار دیواری تجاوزات نہیں، انتظامیہ نے معاہدے کی خلاف ورزی کی۔ چوہدری عارف

جہلم: چوہدری فرخ الطاف کی گھر کی چار دیواری تجاوزات نہیں ،بلکہ مکان سے ملحقہ سڑک کے کنارے آٹھ مرلے کا پلاٹ 25مئی 1995کو چوہدری فرخ کے نام الاٹ ہوا ،انتظامیہ نے معاہدے کی خلاف ورزی کی اور تجاوزات کے خلاف آپریشن معاہدے سے ہٹ کر ہوا۔

ان خیالات کااظہار ق لیگی وتاجر راہنما چوہدری محمد عارف نے پریس کانفرنس کے دوران کیا،انہوں نے کہا کہ چوہدری فرخ الطاف کی گھر کی چار دیواری کے متعلق میڈیا کو آگاہ کرنے کا اختیار گزشتہ رات مجھے چوہدری فرخ الطاف ایم این اے نے دیا،ان سے میرا درینہ خاندانی تعلقات ہیں ان کے سول لائن پر مکان کے متعلق یہ پراپیگنڈہ کیا جارہا ہے،کہ گھر کے سامنے سڑک کنارے آٹھ مرلے کا پلاٹ جس پر چار دیواری بنی ہے وہ تجاوزات ہے اور آپریشن کے دوران یہ چار دیواری کیوں نہیں گرائی گئی۔

انہوں نے کہا کہ چوہدری فرخ الطاف کے مکان سے ملحقہ سڑک کے کنارے خسرہ نمبر 2490کا آٹھ مرلے کا پلاٹ حکومت پنجاب کی ملکیت تھا جو کالونیز ڈیپارٹمنٹ لاہور حکومت پنجاب کے لیٹر نمبر 535-95/1392کے تحت بذریعہ ڈپٹی کمشنر جہلم مبلغ 474981.61روپے کے عوض مورخہ 25-05-1995کو چوہدری فرخ الطاف کے نام الاٹ کیا گیا۔

انہوں نے تجاوزات آپریشن کے حوالہ سے ایک سوال کا جواب دیتے ہوئے کہا کہ پنجاب حکومت نے جس طریقہ کار سے آپریشن کی ہدایات دی تھیں انتظامیہ اس کے مطابق آپریشن نہیں کر رہی بلکہ تجاوزات کے آپریشن سے قبل میری ایم این اے چوہدری فرخ الطاف کے ساتھ ڈی سی جہلم سے میٹنگ ہوئی جس میں ناصر محمود وڑائچ میونسپل چیف آفیسر بھی موجو د تھے ،اس میں تاجروں اور ریڑھی ،ٹھیلے والوں کے تحفظات سے آگاہ کیا اور جو شرائط طے ہوئیں اس سے ہٹ کر آپریشن کیاگیا۔

ایک اور سوال کے جواب میں چوہدری محمد عارف نے کہا کہ میرا پی ٹی آئی سے کوئی تعلق نہیں مگر خاندانی تعلق کی وجہ سے چوہدری فرخ الطاف میرا بھائی ہے انہوں نے میری ڈیوٹی لگائی تھی کہ میں ان کی پراپرٹی کے حوالہ سے حقائق سے آگاہ کروں ۔انہوں نے مزید کہا کہ ق لیگ کا اتحاد صرف الیکشن تک تھا اب ہمارے پاس کوئی اختیارات نہیں ہیں،ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ تاجروں اور غریب ریڑھی والوں کے حق کے لیے دھرنا تو کیا آخری حد تک بھی میں جاؤںگا۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button