میونسپل کمیٹی سوہاوہ میں کرپشن عروج پر، سی او دینہ سمیت ہر کوئی بہتی گنگا میں ہاتھ دھونے لگا

0

سوہاوہ: اندھیر نگڑی چوپٹ راج ، میونسپل کمیٹی سوہاوہ میں کرپشن عروج پر، چیف میونسپل آفیسر کی خالی سیٹ پر اضافی چارج لینے والے سی او دینہ نے بھی بہتی گنگا میں ہاتھ دھونا شروع کر دیے جبکہ احتساب اور تبدیلی کے نام پر ووٹ لینے والی حکومت بھی کرپٹ مافیا کے آگے بے بس ہے۔ اینٹی کرپشن میں موجود کالی بھیڑیں پی ٹی آئی حکومت کی طرف سے خاموشی پر سابقہ روش برقرار رکھے ہوئے ہے۔

میونسپل کمیٹی سوہاوہ جس میں واٹر سپلائی سکیم ہو یا ڈمی بلز پاس کرنے ہوں عرصہ دراز سے آڈٹ نہ ہونے اور اینٹی کرپشن کے افسران تک حصہ پہنچنے کی وجہ سے کرپشن عروج پر رہی ہے لیکن آج تک نہ تو کسی اینٹی کرپشن جیسے محکمے نے ان کو ہاتھ ڈالنے کی جرات کی اور نہ ہی احتساب کرنے والے اداروں نے اس طرف منہ کیا جی ٹی روڈ پر ناقص میٹریل کا استمعال کر کے قومی خزانے کو کروڑوں کا ٹیکہ لگانا ہو یا میونسپل کمیٹی میں ہزاروں کا کام لاکھوں روپے میں لینا ہو تحصیل سوہاوہ میں ٹرانسفر کراؤ یا کام کو کوئی پوچھنے والا نہیں۔

میونسپل کمیٹی سوہاوہ میں حالیہ دنوں میں ایک چھپر کی تعمیر جاری ہے جس کا ایک ممبر نے نام ظاہر نہ کرنے کی شرط پر بتایا کہ چھپر کو جن پائپ پر کھڑا کیا گیا ہے وہ بھی میونسپل کمیٹی میں موجود پرانے پائپ ہیں جبکہ چھپر لگانے کے لیے کھدائی کا کام بھی میونسپل کمیٹی کے ملازمین۔ سے کیا جا رہا ہے جبکہ باوثوق ذرائع سے ٹینڈر چیک کرنے پر معلوم ہوا کہ پانچ لاکھ روپے سرکاری خزانے سے لٹائے جائینگے اب ہزاروں کی چیز کا لاکھوں روپے بلز منظور ہو گا وہ کس کس کی جیب میں جائیگا اس کا اندازہ لگانا مشکل کام نہیں۔

شہریوں کی طرف سے مقامی ایم پی اے راجہ یاور کمال سے اپیل کی گئی ہے کہ ایک طرف آپ کی حکومت پچھلے سات ماہ میں احتساب کے عمل پر کروڑوں خرچ کر رہی ہے اور عام کی طرف سے انہیں ووٹ بھی اس ملک سے کرپشن کے خاتمے کی یقین دہانی پر دیا گیا لیکن دوسری طرف میونسپل کمیٹی سوہاوہ میں ہر ماہ کسی نہ کسی نام نہاد کام کے نام پر لاکھوں روپے کا چونا سرکاری خزانے کو لگایا جاتا ہے جس میں سرکاری ملازم بھی ملوث ہوتے ہیں اور جی ٹی روڈ سوہاوہ جس کی روڈ اپنے تعمیر کے چند دن بعد بلکہ دوران تعمیر ہی اس کا بیشتر حصہ کرپشن کی نظر ہو گیا تھا لیکن آج تک کسی بھی احستاب کرنے والے ادارے نے ان کالی بھیڑوں کونشاں عبرت نہیں بنایا۔

عوامی حلقوں کا آپ سے مطالبہ ہے کہ آپ نہ صرف میونسپل کمیٹی سوہاوہ کے انتظامی امور کی نگرانی کریں بلکہ آپ کے حلقہ کی حدود میں ہونے والے تمام سرکاری ٹینڈرز اور سرکاری اداروں کو آڈٹ کروائیں کیونکہ آپ کی نگرانی سے نہ صرف کرپشن کے خاتمے میں مدد مل سکے گی بلکہ عوام کی طرف سے دیے گیے ٹیکس سے سرکاری خزانے کو پہنچائے جانے والے نقصان کا ازالہ بھی ممکن ہو گا اور کرپٹ اور کالی بھیڑوں کو ان کے منطقی انجام تک پہنچانے میں مدد بھی مل سکے گی۔

اس حوالے سے عوامی حلقے امید رکھتے ہیں کہ ڈپٹی کمشنر جہلم جو کہ ضلع میں اینٹی کرپشن کے ہیڈ بھی ہیں وہ اپنا کردار بھی ادا کرینگے اور اس حوالے سے فوری نوٹس لیں گے۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.