جہلم

تین تین مرتبہ ممبران قومی و صوبائی اسمبلی رہنے والے حلقوں کی محرومیاں ختم نہ کرسکے

جہلم: تین تین مرتبہ ممبران قومی و صوبائی اسمبلی رہنے والے حلقوں کی محرومیاں ختم نہ کرسکے، غریب عوام آج کے ترقی یافتہ دور میں بھی بجلی ، پانی ، سوئی گیس جیسی نعمتوں سے ناآشنا ، حکمرانوں کے ناقص کارکردگی کا جواب 25 جولائی کودیں گے۔ شہریوں کا متفقہ فیصلہ

تفصیلات کے مطابق جہلم شہر سے ملحقہ کچی آبادیوں کے مکینوں نے اخبار نویسوں سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ہر 5 سال کے بعد ممبران قومی و صوبائی اسمبلی جھوٹی طفل تسلیاں دیکر ووٹ حاصل کرتے ہیں اور اس کے بعد حلقہ سے لا تعلقی اختیار کر لیتے ہیں آج کے ترقی یافتہ دور میں بھی جہلم شہر سے ملحقہ آبادیاں پسماندگی کا شکار ہیں جہاں بجلی ، سوئی گیس ، صاف پانی ، سیوریج جیسی سہولتوں کا کوئی وجود نہیں،کچی آبادیوں کے مکینوں کا کہناہے کہ 25 جولائی کو ہونے والے عام انتخابات میں ووٹ کی طاقت سے ایسے نمائندوں کو منتخب کریں گے جنہیں غریب عوام کی نمائندگی کا سلیقہ آتا ہواور جو سہولیات فراہم کرنے کے حوالے سے واقف ہوں ۔

علاقہ مکینوں کا کہنا تھا کہ سابق ممبران قومی و صوبائی اسمبلی نے 5 سال تک ہمیں فٹ بال بنائے رکھا جب جی چاہا استعمال کیا اور جب جی چاہا ٹھوکر مار دی ، متاثرہ افراد کا کہنا ہے کہ ہمارے سیاست دان آج بھی 70 کی دھائی میں رہ رہے ہیں ، اگر ہم نے سولر سسٹم ہی استعمال کرنا ہے تو ٹیکسز کی مد میں بھتہ وصول کرنے والوں کو جواب دینا چاہیے کہ وہ ٹیکسوں کے نام پر کیوں لوٹ مار جاری رکھے ہوئے ہیں ۔

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button